ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

نربھیا کے قصورواروں کو یکم فروری کو بھی پھانسی پر لٹکایا جانا مشکل ، یہ ہے وجہ

نربھیا کی ماں کے وکیل جتیندر جھا کا کہنا ہے کہ ابھی بھی مجھے لگتا ہے کہ 74 سے 75 دن مزید لگیں گے ۔

  • Share this:
نربھیا کے قصورواروں کو یکم فروری کو بھی پھانسی پر لٹکایا جانا مشکل ، یہ ہے وجہ
نربھیا کے قصورواروں کو یکم فروری کو بھی پھانسی پر لٹکایا جانا مشکل ، یہ ہے وجہ

نربھیا سانحہ کے قصورواروں کی پھانسی ملتوی ہوجانے پر نربھیا کی ماں کافی مایوس ہیں ۔  انہوں نے کہا کہ مجھے انصاف چاہئے ، مجھے نہیں معلوم عدالت کیسے دے گا ۔ انہوں نے کہا کہ جو قصوروار چاہتے ہیں وہی ہورہا ہے ۔ تاریخ پر تاریخ دی جارہی ہے ۔ ہمارا نظام ایس اہے کہ جہاں قصورواروں کی سنی جاتی ہے ۔


خیال رہے کہ نربھیا آبروریزی معاملےمیں چاروں قصورواروں کے خلاف جمعہ کو نیا ڈیتھ وارنٹ جاری کیا گیا۔ چاروں کو یکم فروری کی صبح چھ بجے تہاڑ جیل میں پھانسی دی جائے گی ۔ پٹیالہ ہاؤس کی عدالت نے نربھیا معاملہ پر سماعت کرتے ہوئے نیا ڈیتھ وارنٹ جاری کیا ۔ اس کے مطابق چاروں قصورواروں کو یکم فروری کو صبح چھ بجے پھانسی دی جائے گی ۔


قابل ذکر ہے کہ اس سے پہلے چاروں قصورواروں کو 22 جنوری کو پھانسی دی جانی تھی ۔ اس معاملہ کے ایک قصوروار مکیش سنگھ کی رحم کی درخواست صدر رام ناتھ کووند نے آج ہی مسترد کردی ہے ۔ مکیش کی مرسی پٹیشن مسترد کئے جانے کے بعد نیا ڈیتھ ورانٹ جاری کرنا پڑا اور پھانسی کی تاریخ بھی آگے بڑھانی پڑی۔


کہ نربھیا آبروریزی معاملےمیں چاروں قصورواروں کے خلاف جمعہ کو نیا ڈیتھ وارنٹ جاری کیا گیا۔
کہ نربھیا آبروریزی معاملےمیں چاروں قصورواروں کے خلاف جمعہ کو نیا ڈیتھ وارنٹ جاری کیا گیا۔


تو کیا یکم فروری کو بھی نہیں ہوپائے گی پھانسی ؟

نربھیا کی ماں کے وکیل جتیندر جھا کا کہنا ہے کہ ابھی بھی مجھے لگتا ہے کہ 74 سے 75 دن مزید لگیں گے ۔ جج نے مانا ہے یہ تاخیر کی تدبیر ہے ۔ نیا ڈیتھ وارینٹ جاری ہو تو گیا ہے ، لیکن کوئی بھی ایک اگر 31 جنوری کی دوپہر 12 بجے سے پہلے صدر جمہوریہ کے پاس رحم کی عرضی داخل کردیتا ہے تو پھانسی رک جائے گی ۔ عدالت نے قصورواروں کا نیا ڈیتھ وارنٹ جاری کیا ہے ۔ حالانکہ قصورواروں کے وکیل معاملہ کو مزید طول دینے کی کوشش میں ہیں ۔ ایک قصوروار کی عمر کو لے کر اعتراض کیا جارہا ہے ۔ کہا جارہا ہے کہ واقعہ کے وقت وہ بالغ نہیں تھا ۔

وہیں دوسری طرف قصورواروں کے وکیل نے کہا ہے کہ آئین کو طاق پر رکھ کر نیا ڈیتھ وارنٹ جاری ہوا ہے ۔ جج نے جوڈیشیل مائنڈ اپلائی نہیں کیا ۔ ابھی لیگل ریمیڈیز باقی ہیں ۔ میں نے جج سے کہا تھا کہ معاملہ زیر التوا ہے ، مگر جج نے نہیں سنا ۔ اب میں اعلی عدالت جاوں گا ۔
First published: Jan 17, 2020 08:15 PM IST