உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Special Report: نہیں کم ہوں گے تیل اور گیس کی قیمتیں، ابھی اور جیب خالی کرنے کے لئے رہیں تیار

    سوال یہ ہے کہ تیل کی قیمتیں کیا کم ہوں گی؟ ٹھنڈ کے دنوں میں تیلوں اور گیسوں کی قیمتیں کم رہتی ہیں۔ سپلائی کے ٹرک اور ٹینکر سڑکوں پر کم ہی نکلتے ہیں، لیکن جیسے جیسے موسم میں گرمی آئے گی، تیلوں کی قیمتوں میں اضافہ ہوگا۔ گرمی بڑھنے سے تیل اور گیس کی مانگ بڑھتی ہے اور اس کے نتیجے میں قیمتیں بھی بڑھتی ہیں۔ اس لئے آنے والے وقت میں قیمتیں کم ہونے کی گنجائش کم اور بڑھنے کی زیادہ ہیں۔

    سوال یہ ہے کہ تیل کی قیمتیں کیا کم ہوں گی؟ ٹھنڈ کے دنوں میں تیلوں اور گیسوں کی قیمتیں کم رہتی ہیں۔ سپلائی کے ٹرک اور ٹینکر سڑکوں پر کم ہی نکلتے ہیں، لیکن جیسے جیسے موسم میں گرمی آئے گی، تیلوں کی قیمتوں میں اضافہ ہوگا۔ گرمی بڑھنے سے تیل اور گیس کی مانگ بڑھتی ہے اور اس کے نتیجے میں قیمتیں بھی بڑھتی ہیں۔ اس لئے آنے والے وقت میں قیمتیں کم ہونے کی گنجائش کم اور بڑھنے کی زیادہ ہیں۔

    سوال یہ ہے کہ تیل کی قیمتیں کیا کم ہوں گی؟ ٹھنڈ کے دنوں میں تیلوں اور گیسوں کی قیمتیں کم رہتی ہیں۔ سپلائی کے ٹرک اور ٹینکر سڑکوں پر کم ہی نکلتے ہیں، لیکن جیسے جیسے موسم میں گرمی آئے گی، تیلوں کی قیمتوں میں اضافہ ہوگا۔ گرمی بڑھنے سے تیل اور گیس کی مانگ بڑھتی ہے اور اس کے نتیجے میں قیمتیں بھی بڑھتی ہیں۔ اس لئے آنے والے وقت میں قیمتیں کم ہونے کی گنجائش کم اور بڑھنے کی زیادہ ہیں۔

    • Share this:
      نئی دہلی: یہ بڑا سوال ہے کہ پٹرول ڈیزل جیسے تیل کی قیمتوں (Oil Prices) میں کوئی کمی ہوگی یا نہیں۔ کیا نیچرل گیس کی قیمتیں (Gas prices) نیچے آئیں گی؟ AP کی ایک رپورٹ دیکھیں تو مستقبل قریب میں تیلوں اور گیسوں کی قیمتیں کم ہونے کے آثار بے حد کم ہیں۔ خام تیل (Crude Oil) پر مبنی یہ رپورٹ تو یہ کہتی ہے کہ قیمتیں مزید بڑھیں گی نا کہ کم ہوں گی۔ اس لئے اگر آپ تیل سستا ہونے کی امید لگائے بیٹھے ہیں، تو آپ کو مایوسی ہاتھ لگ سکتی ہے۔ ہوسکتا ہے پہلے کے مقابلے آنے والے دنوں میں جب زیادہ خالی کرنی پڑے۔

      حالیہ ایک دو اقدامات کی وجہ سے عوام میں امید پیدا ہوئی کہ تیل کی قیمتیں نیچے آئیں گی۔ امریکی صدر جو بائیڈن نے گزشتہ سال نومبر میں بڑا فیصلہ کرتے ہوئے ذخائر سے تیل نکالنے کا اعلان کیا تھا۔ امریکہ کے ساتھ ساتھ دنیا کی تقریباً تمام اقتصادی طاقتوں نے اپنے ذخائر سے تیل نکالا، جن میں بھارت بھی شامل تھا۔ ابھی آئل ریلیز کا مرحلہ جاری ہے کیونکہ یہ مرحلہ وار طریقے سے کیا جا رہا ہے۔ بائیڈن اور دیگر ممالک کے فیصلے نے اچھا اثر دکھایا اور تیل کی قیمتیں کچھ دنوں تک کم رہیں۔ لیکن یہ قدم مکمل نہیں رہا اور اب قیمتیں دوبارہ بڑھنا شروع ہو گئی ہیں۔

      اومیکرون کا اثر
      قیمتیں تھوڑی نیچے آ رہی تھیں کہ Omicron کے مختلف ویرینٹس آگئے۔ لوگوں نے پھر محسوس کیا کہ تیل کی قیمت گرے گی کیونکہ قیمتوں میں کمی کا رجحان وائرس کے حملے میں دیکھا گیا ہے۔ لوگ وبا میں گھر سے کم نکلتے ہیں، گاڑیاں کم چلتی ہیں اور تیل کی مانگ کم ہوتی ہے۔ اس سے قیمت میں بھی کمی آتی ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اومیکرون کی وجہ سے پوری دنیا میں ٹریفک میں 8 سے 9 فیصد تک کمی آئی ہے لیکن تیل کی قیمتیں کم نہیں ہوئیں۔ اتنا ٹریفک کم کرنے کے بعد بھی دنیا میں تیل کی مانگ زیادہ ہے جس کی سپلائی نہیں ہو پارہی ہے۔ اوپیک پلس تیل پیدا کرنے والے ممالک پہلے سے کم تیل پیدا کر رہے ہیں۔ جیسے ہی Omicron شروع ہوا، بہت سے امریکی کنوؤں نے تیل نکالنے میں کمی کردی اور اب تک سپلائی میں اضافہ نہیں کیا گیا۔

      نہیں کم ہوں گے تیل کی قیمتیں
      اب سوال یہ ہے کہ تیل کی قیمتیں کیا کم ہوں گی؟ ٹھنڈ کے دنوں میں تیلوں اور گیسوں کی قیمتیں کم رہتی ہیں۔ سپلائی کے ٹرک اور ٹینکر سڑکوں پر کم ہی نکلتے ہیں، لیکن جیسے جیسے موسم میں گرمی آئے گی، تیلوں کی قیمتوں میں اضافہ ہوگا۔ گرمی بڑھنے سے تیل اور گیس کی مانگ بڑھتی ہے اور اس کے نتیجے میں قیمتیں بھی بڑھتی ہیں۔ اس لئے آنے والے وقت میں قیمتیں کم ہونے کی گنجائش کم اور بڑھنے کی زیادہ ہیں۔ کورونا کا قہر جیسے جیسے کم ہوگا، ویسے ویسے سڑکوں پر لوگ اتریں گے۔ تیل اور گیس کی کھپت بڑھے گی، لہٰذا قیمتیں بھی بڑھیں گی۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: