اپنا ضلع منتخب کریں۔

    راجیہ سبھا میں یو سی سی پر پرائیویٹ ممبر بل پیش، بی جے پی ممبر پارلیمنٹ کروڑی لال مینا نے پیش کی تجویز

    راجیہ سبھا میں یو سی سی پر پرائیویٹ ممبر بل پیش، بی جے پی ممبر پارلیمنٹ کروڑی لال مینا نے پیش کی تجویز ۔ فائل فوٹو ۔

    راجیہ سبھا میں یو سی سی پر پرائیویٹ ممبر بل پیش، بی جے پی ممبر پارلیمنٹ کروڑی لال مینا نے پیش کی تجویز ۔ فائل فوٹو ۔

    uniform civil code : ملک میں طویل عرصہ سے جاری بحث کے درمیان یونیفارم سول کوڈ کی تجویز راجیہ سبھا میں پیش کردی گئی ہے ۔ سرمائی اجلاس کے دوران راجیہ سبھا میں یو سی سی پر پرائیویٹ ممبر بل پیش کیا گیا ہے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | New Delhi
    • Share this:
      نئی دہلی : ملک میں طویل عرصہ سے جاری بحث کے درمیان یونیفارم سول کوڈ کی تجویز راجیہ سبھا میں پیش کردی گئی ہے ۔ سرمائی اجلاس کے دوران راجیہ سبھا میں یو سی سی پر پرائیویٹ ممبر بل پیش کیا گیا ہے ۔ بی جے پی کے ممبر پارلیمنٹ کروڑی لال مینا نے راجیہ سبھا میں یو سی سی پر پرائیویٹ بل پیش کیا ہے ۔ اس کو لے کر پارلینٹ میں ہنگامہ آرائی شروع ہوگئی ۔ اپوزیشن نے اس بل کی جم کر مخالفت کی ہے ۔

      راجستھان سے بی جے پی کی ممبر پارلیمنٹ کروڑی لال مینا نے جمعہ کو راجیہ سبھا میں پرائیویٹ بل پیش کیا ۔ راجیہ سبھا میں اپوزیشن کے اراکین نے جم کر اس بل کی مخالفت کی ۔ شور شرابہ کے درمیان راجیہ سبھا میں پیش ہوگیا ۔


      یہ بھی پڑھئے : ایم سی ڈی الیکشن میں جیتنے والے دو کونسلروں نے دیا کانگریس کو جھٹکا، اے اے پی میں شامل


      یہ بھی پڑھئے : بہار بورڈ امتحانات کی ڈیٹ شیٹ جاری، یکم فروری سے شروع ہوں گے امتحان، ٹائم ٹیبل یہاں دیکھئے


      قابل ذکر ہے کہ یو سی سی بی جے پی کے انتخابی وعدوں میں سے ایک ہے ۔ بی جے پی کی حکومت والی کئی ریاستوں میں یو سی سی کی کارروائی شروع ہوچکی ہے ۔ حال ہی میں مدھیہ پردیش کی سرکار نے ریاست میں یونیفارم سول کوڈ لاگو کرنے کے اشارے دئے تھے ۔

      وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان نے اس کیلئے ایک کمیٹی تشکیل کردی ہے ۔ پچھلے ہفتہ وزیر اعلی شیوراج نے کہا تھا کہ میں اس بات کے حق میں ہوں کہ ہندوستان میں اب وقت آگیا ہے کہ کامن سول کوڈ لاگو ہونا چاہئے ۔ ایک سے زیادہ شادی کیوں کرے کوئی، مدھیہ پردیش میں بھی کمیٹی بنا رہا ہوں ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: