دہلی ہائی کورٹ سے پی چدمبرم کو نہیں ملی راحت ، 19 ستمبر تک تہاڑ جیل میں ہی رہنا ہوگا

ای ڈی کے سامنے خودسپردگی کی عرضی خارج ہوجانے کے بعد مسٹر چدمبرم کو اب 19ستمبرتک تہاڑ جیل میں ہی رہنا ہوگا ۔

Sep 13, 2019 06:32 PM IST | Updated on: Sep 13, 2019 06:52 PM IST
دہلی ہائی کورٹ سے پی چدمبرم کو نہیں ملی راحت ، 19 ستمبر تک تہاڑ جیل میں ہی رہنا ہوگا

پی چدمبرم

آئی این ایکس میڈیا کیس میں عدالتی تحویل میں تہاڑ جیل بھیجے گئے کانگریس کےسینئر لیڈر اور سابق وزیرخزانہ پی چدمبرم کو مرکزی تفتیشی بیورو(سی بی آئی) کی خصوصی عدالت سے جمعہ کو راحت نہیں ملی ۔ عدالت نے اس معاملہ میں انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی )کےسامنے خودسپردگی کرنے کی ان کی عرضی خارج کردی ۔

سی بی آئی کے خصوصی جج اجے کمار نے آج یہ فیصلہ سنایا۔ای ڈی کے سامنے خودسپردگی کی عرضی خارج ہوجانے کے بعد مسٹر چدمبرم کو اب 19ستمبرتک تہاڑ جیل میں ہی رہنا ہوگا ۔ خیال رہے کہ ای ڈی نے جمعرات کو سی بی آئی کی خصوصی عدالت کے سامنے کہا تھا کہ اس معاملہ میں پوچھ تاچھ کے لیے اسے ابھی پی چدمبرم کو حراست میں لینے کی کوئی ضرورت نہیں ہے ۔

جانچ ایجنسی نے کہا تھا کہ جب اس کی ضرورت ہوگی تو وہ عدالت سے درخواست کرے گی ۔ای ڈی کی طرف سے عدالت میں کہا گیا چونکہ پی چدمبرم سی بی آئی معاملہ میں عدالتی تحویل میں ہیں ، اس لیے وہ ایسی حالت میں نہیں ہیں کہ ثبوتوں کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرسکیں ۔

Loading...