ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں کے ایئرفورس اسٹیشن پر دہشت گردانہ حملہ کے پیچھے ہوسکتا ہے لشکر یا جیش کا ہاتھ ، الرٹ جاری

Jammu and Kashmir News : جموں و کشمیر کے ڈی جی پی دلباغ سنگھ نے جموں ایئرپورٹ پر انڈین ایئرفورس کے دائرہ اختیار والے حصہ میں ہوئے دو دھماکوں کو دہشت گردانہ حملہ قرار دیا ہے ۔

  • Share this:
جموں کے ایئرفورس اسٹیشن پر دہشت گردانہ حملہ کے پیچھے ہوسکتا ہے لشکر یا جیش کا ہاتھ ، الرٹ جاری
جموں کے ایئرفورس اسٹیشن پر دہشت گردانہ حملہ کے پیچھے ہوسکتا ہے لشکر یا جیش کا ہاتھ ، الرٹ جاری

نئی دہلی : جموں کے ستواری علاقہ میں موجود ایئرفورس اسٹیشن میں اتوار کی صبح ہوئے دھماکوں کے بعد الرٹ جاری کردیا گیا ہے ۔ انڈین ایئرفورس کا اسٹیشن ہیڈکوارٹر اور اس کے ساتھ ہی جموں کا مین ایئرپورت بھی اسی احاطہ میں آتا ہے ۔ اس دھماکہ کے بعد آس پاس کے علاقوں میں افراتفری پھیل گئی ۔ سیکورٹی ایجنسیوں کا کہنا ہے کہ ہندوستانی فضائیہ کے اڈے پر ڈرون کے ذریعہ کئے گئے دوہرے دھماکے کے پیچھے پاکستان میں واقع دہشت گرد تنظیم لشکر طیبہ یا جیش محمد کا ہاتھ ہوسکتا ہے ۔


وہیں جموں و کشمیر کے ڈی جی پی دلباغ سنگھ نے جموں ایئرپورٹ پر انڈین ایئرفورس کے دائرہ اختیار والے حصہ میں ہوئے دو دھماکوں کو دہشت گردانہ حملہ قرار دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پولیس ، فضائیہ اور دیگر ایجنسیاں حملے کی جانچ کررہی ہیں ۔ اس معاملہ میں دو مشتبہ افراد کو حراست میں لیا گیا ہے اور ان سے پوچھ گچھ کی جارہی ہے ۔ اس ڈرون حملے کے بعد پٹھان کوٹ ، امبالہ ، اونتی پور سمیت کچھ دیگر ایئربیٹ کو ہائی الرٹ پر رکھا گیا ہے ۔ دہشت گردی کے پہلو سے بھی این ایس جی اور دیگر ایجنسیاں جانچ کررہی ہیں ۔


لشکر کا آپریٹو پانچ کلو وزنی آئی ای ڈی سمیت گرفتار


دریں اثنا دلباغ سنگھ نے کہا ہے کہ جموں میں لشکر طیبہ کے ایک آپریٹو کے قبضے سے پانچ کلو گرام وزنی آی ای ڈی برآمد کر کے دہشت گردی کے ایک بڑے منصوبے کو ناکام بنادیا گیا ہے ۔ پولیس سربراہ نے نیوز ایجنسی یو این آئی کو بتایا کہ جموں پولیس نے ایک پانچ تا چھ کلو گرام وزنی آئی ای ڈی برآمد کیا ہے۔ یہ آئی ای ڈی لشکر طیبہ کے ایک آپریٹو کو کسی بھیڑ بھاڑ والی جگہ پر نصب کرنے کے لئے دیا گیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ گرفتار شدہ شخص سے تفتیش کی جا رہی ہے اور اس معاملے میں مزید گرفتاریاں متوقع ہے ۔ سیکورٹی ذرائع نے بتایا کہ جموں و کشمیر پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ نے ہفتہ کی شام نروال علاقے میں لشکر طیبہ کے آپریٹو کو دھماکہ خیز مواد سمیت گرفتار کیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ مذکورہ شخص کو ایک مشہور شاپنگ مال کے قریب اسلحہ ، گولہ بارود اور پانچ کلو گرامی وزنی آئی ای ڈی سمیت گرفتار کیا گیا ۔

مذکورہ ذرائع نے دعویٰ کیا کہ اس گرفتاری کے نتیجہ میں جموں شہر میں حملے کے ایک بڑے منصوبے کو ناکام بنادیا گیا ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ مشتبہ شخص کو گرفتاری کے فوراً بعد محفوظ جگہ پر لے جایا گیا ،جہاں اس سے تفتیش کی جارہی ہے ۔

نیوز ایجنسی یو این آئی کے ان پٹ کے ساتھ ۔ 
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jun 27, 2021 06:30 PM IST