உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ہندوستان سے جنگ ہوئی تو پاکستان کی ہوگی شکست: عمران خان کا اعتراف

    پاکستانی وزیراعظم عمران خان: فائل فوٹو

    پاکستانی وزیراعظم عمران خان: فائل فوٹو

    پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے جموں و کشمیر سے دفعہ 370 ہٹائے جانے کے بعد ہندوستان کے ساتھ جاری تنازع اور کشیدگی کے درمیان یہ اعتراف کیا ہے کہ اگر ہندوستان کے ساتھ روایتی جنگ ہوئی تو ان کے ملک کو منہ کی کھانی پڑے گی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے جموں و کشمیر سے دفعہ 370 ہٹائے جانے کے بعد ہندوستان کے ساتھ جاری تنازع اور کشیدگی کے درمیان یہ اعتراف کیا ہے کہ اگر ہندوستان کے ساتھ روایتی جنگ ہوئی تو ان کے ملک کو منہ کی کھانی پڑے گی ۔عمران خان نے’ الجزیرہ‘ کو دیئے انٹرویو میں کہا کہ اگر پاکستان نے ہندوستان کے ساتھ روایتی جنگ لڑی اور وہ ہارنے لگا تب اس کے پاس دو ہی آپشن ہوں گے، یا تو وہ ہتھیار ڈال دے اور یا پھر آخری دم تک آزادی کی لڑائی لڑے۔ انہوں نے کہا کہ انہیں معلوم ہے کہ پاکستانی اپنی آزادی کی جنگ آخری سانس تک لڑیں گے۔ ایسے میں جب نیوکلیائی ہتھیاروں سے لیس دو ممالک لڑیں گے تو اس کے اپنے نتائج ہوں گے۔

      یہ پوچھے جانے پر کہ کیا کشمیر میں موجودہ حالات کے پیش نظردونوں نیوکلیائی ہتھیاروں سے لیس ممالک کے درمیان کسی بڑے تصادم یا جنگ کا خطرہ ہے، عمران خان نے کہا’’ہاں، دونوں ممالک کے درمیان جنگ کا خطرہ ہے‘‘۔انہوں نے کہا کہ اپنے پڑوسی ممالک میں پاکستان کا چین کے ساتھ اس وقت اتنا قریبی تعلق ہے جتنا پہلے کبھی نہیں رہا ہے لیکن ہندوستان کے ساتھ یہ بالکل نچلی سطح پر پہنچ گیا ہے۔
      عمران خان نے کہا’’کشمیر میں 80 لاکھ مسلمان تقریباً گزشتہ 6 ہفتوں سے قید ہیں۔ ہندوستان، پاکستان پردہشت گردی پھیلانے کا الزام لگا کردنیا کی توجہ اس قضیہ سے بھٹكانا چاہتا ہے۔ پاکستان کبھی جنگ کا آغاز نہیں کرے گا اورمیں اس سلسلہ میں بالکل واضح ہوں، میں امن پسند انسان ہوں، میں جنگ کے خلاف ہوں، میرا خیال ہے کہ جنگ کسی مسئلہ کا حل نہیں ہے‘‘۔
      First published: