உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ہندوستان کی سرزنش کے بعد بھی نہیں پاکستان کی نہیں بدلی روش، پھر چھیڑا ’مسئلہ کشمیر‘ کا راگ، کہا، کشمیریوں کے ساتھ دھڑکتے ہیں ہمارے دل

     جتیندر سنگھ نے کہا، ’ہمارے پڑوسی کی طرف سے دنیا بھر میں حمایت حاصل کرنے کے لیے ایک ٹول کٹ بنا کر کیے جانے والے ’نئے تجربات‘ سے ہندوستان کو خوفزدہ نہیں کیا جا سکتا۔‘ انہوں نے کہا کہ اگر پاکستان اور ہندوستان کے درمیان زیر التواء، کوئی مسئلہ ہے تو وہ جموں و کشمیر کا وہ حصہ ہے جو پڑوسی ملک کے غیر قانونی قبضے میں ہے۔

    جتیندر سنگھ نے کہا، ’ہمارے پڑوسی کی طرف سے دنیا بھر میں حمایت حاصل کرنے کے لیے ایک ٹول کٹ بنا کر کیے جانے والے ’نئے تجربات‘ سے ہندوستان کو خوفزدہ نہیں کیا جا سکتا۔‘ انہوں نے کہا کہ اگر پاکستان اور ہندوستان کے درمیان زیر التواء، کوئی مسئلہ ہے تو وہ جموں و کشمیر کا وہ حصہ ہے جو پڑوسی ملک کے غیر قانونی قبضے میں ہے۔

    جتیندر سنگھ نے کہا، ’ہمارے پڑوسی کی طرف سے دنیا بھر میں حمایت حاصل کرنے کے لیے ایک ٹول کٹ بنا کر کیے جانے والے ’نئے تجربات‘ سے ہندوستان کو خوفزدہ نہیں کیا جا سکتا۔‘ انہوں نے کہا کہ اگر پاکستان اور ہندوستان کے درمیان زیر التواء، کوئی مسئلہ ہے تو وہ جموں و کشمیر کا وہ حصہ ہے جو پڑوسی ملک کے غیر قانونی قبضے میں ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی:ہندوستان (India) کی جانب سے بار بار سرزنش کیے جانے کے بعد بھی پاکستان (Pakistan) کشمیر کا راگ جاری رکھے ہوئے ہے۔ درحقیقت، پاکستان کی اعلیٰ قیادت نے ہفتے کے روز کشمیر(Kashmir) کے لوگوں کے لیے اپنی حمایت کا اعادہ کیا اور کہا کہ اسلام آباد (Islamabad) اس مسئلے پر اپنے اصولی موقف سے پیچھے نہیں ہٹا۔ ’یوم یکجہتی کشمیر‘ کے موقع پر ایک ریلی سے خطاب کرتے ہوئے صدر عارف علوی نے کہا کہ ان کا ملک تنازعہ کشمیر کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق چاہتا ہے جو کشمیری عوام کے حق خود ارادیت کو تسلیم کرتی ہے۔

      پاکستان ہر سال 5 فروری کو ’یوم یکجہتی کشمیر‘ (Kashmir Solidarity Day) مناتا ہے۔ صدر مملکت عارف علوی(Arif Alvi) نے کہا کہ ’پاکستان کشمیر پر اپنے اصولی موقف سے پیچھے نہیں ہٹا‘، انہوں نے کہا کہ ملک کشمیر کے ساتھ کھڑا ہے کیونکہ وہ ہمارے جسم کا حصہ ہیں اور ہمارے دل ایک ساتھ دھڑکتے ہیں۔ کشمیر پر پاکستان کے اصولی موقف میں کہا گیا ہے کہ ملک جموں و کشمیر کے مسئلہ کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل (UNSC) کی قراردادوں کے مطابق اور آزادانہ اور منصفانہ استصواب رائے کے ذریعے حل کرنے کے لیے پرعزم ہے۔

      عمران خان اور باجوا نے کہی یہ بات
      پاکستان کے وزیراعظم عمران خان، جو اس وقت چین کے دورے پر ہیں، نے ٹوئٹر پر کہا، ’پاکستان اپنے کشمیری بھائیوں اور بہنوں کے ساتھ متحد ہے اور ان کی حق خودارادیت کے لیے ان کی جائز جدوجہد کے لیے پرعزم ہے۔‘ پاک فوج (Pakistan Army) نے کہا۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ (Qamar Javed Bajwa) نے بھی کشمیری عوام کی قربانیوں اور عزم کو یاد کیا۔ فوج نے ان کے حوالے سے کہا کہ ’اب وقت آگیا ہے کہ اس انسانی المیے کو ختم کیا جائے اور مسئلہ کشمیر کو جموں و کشمیر کے عوام کی امنگوں اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کیا جائے۔‘ پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی(Shah Mahmood Qureshi) نے اپنے ٹویٹ میں پاکستان کشمیریوں کے ساتھ کھڑا ہے۔

      پاکستان کے ’نئے تجربے‘ سے ڈرتا نہیں ہے ہندوستان
      ہندوستان کے مرکزی وزیر اور جموں و کشمیر کی اودھم پور لوک سبھا سیٹ سے رکن پارلیمنٹ جتیندر سنگھ نے کہا، ’ہمارے پڑوسی کی طرف سے دنیا بھر میں حمایت حاصل کرنے کے لیے ایک ٹول کٹ بنا کر کیے جانے والے ’نئے تجربات‘ سے ہندوستان کو خوفزدہ نہیں کیا جا سکتا۔‘ انہوں نے کہا کہ اگر پاکستان اور ہندوستان کے درمیان زیر التواء، کوئی مسئلہ ہے تو وہ جموں و کشمیر کا وہ حصہ ہے جو پڑوسی ملک کے غیر قانونی قبضے میں ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: