ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سپریم کورٹ میں سونیا اور راہل گاندھی کے خلاف عرضی، چین سے معاہدے کی طلب کی تفصیل

عرضی میں سپریم کورٹ (Supreme Court) سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ وہ قومی تفتیشی ایجنسی (NIA) یا سی بی آئی سے اس معاملے کی جانچ کرانے سے متعلق احکامات جاری کرے۔

  • Share this:
سپریم کورٹ میں سونیا اور راہل گاندھی کے خلاف عرضی، چین سے معاہدے کی طلب کی تفصیل
سپریم کورٹ میں سونیا اور راہل گاندھی کے خلاف عرضی

نئی دہلی: سال 2008 میں کانگریس اور کمیونسٹ پارٹی چائنا (سی پی سی )کے درمیان ہوئے معاہدے کی جانچ کا مرکزی حکومت کو ہدایت دینے کا مطالبہ کے سلسلے میں بدھ کو ایک عرضی سپریم کورٹ میں دائر کی گئی۔ عرضی دائر کرکے کانگریس اور سی پی سی کے درمیان ہوئے اس معاہدے کی اصلیت کی قومی جانچ ایجنسی (این آئی اے)سے جانچ کرانے کی ہدایت دینے کا مطالبہ کیا گیا ہے،جس میں اعلی سطحی اطلاع اور تعاون کے لین دین کے سلسلے میں اتفاق ہوا تھا۔




عرضی گزار ششانک شیکھر جھا اور سیویو راڈرگس سے آئین کے آرٹیکل 32 کے تحت یہ مفاد عامہ کی عرضی دائر کرکے کانگریس اور سی پی سی کے درمیان معاہدے کی تفصیل کو اجاگر کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔مسٹر جھا پیشہ سے وکیل ہیں جبکہ مسٹر راڈرگس گوا کرانیکل کے ایڈیٹر ان چیف ہیں۔

سال 2008 میں کانگریس اور کمیونسٹ پارٹی چائنا (سی پی سی )کے درمیان ہوئے معاہدے کی جانچ کا مرکزی حکومت کو ہدایت دینے کا مطالبہ کے سلسلے میں بدھ کو ایک عرضی سپریم کورٹ میں دائر کی گئی۔
سال 2008 میں کانگریس اور کمیونسٹ پارٹی چائنا (سی پی سی )کے درمیان ہوئے معاہدے کی جانچ کا مرکزی حکومت کو ہدایت دینے کا مطالبہ کے سلسلے میں بدھ کو ایک عرضی سپریم کورٹ میں دائر کی گئی۔


عرضی گزاروں نے کانگریس،پارٹی صدر سونیا گاندھی ،سابق صدر راہل گاندھی اور مرکزی حکومت کو فریق بنایا ہے۔ عرضی گزاروں نے عدالت سے اس معاملے میں غیر قانونی سرگرمی(روک تھام )قانون ،1967 کے تحت این آئی اے جانچ کی ہدایت دینے کا مطالبہ کیا ہے۔

عرضی میں کہا گیا ہے کہ یو پی اے اور کمیونسٹ پارٹی آف چائنا کے درمیان معاہدے میں دونوں فریق کے درمیان اہم دوطرفہ بات چیت، علاقائی اور بین الاقوامی موضوعات پر تبادلہ خیال کرنے پر اتفاق ہوا ہے۔ عرضی میں کہا گیا ہے کہ کئی میڈیا ہاوس کی ایسی رپورٹ ہیں کہ 2008 سےلے کر 2013 کے درمیان چین کی طرف سے تقریباً 600 بار دراندازی کی کوشش یا تنازعہ کی کوشش ہوئی ہے۔ اس دوران یوپی اے حکومت اقتدار میں تھی۔ یہ ریکارڈ کا معاملہ ہے کہ 2008 میں چین اور کانگریس کے درمیان ہوا معاہدہ پارٹیوں کےدرمیان ہوا معاہدہ تھا۔

نیوز ایجنسی یو این آئی اردو کے اِن پُٹ کے ساتھ۔
First published: Jun 24, 2020 07:13 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading