ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

Plasma Therapy For Covid-19:پلازماتھراپی موثرنہیں،کووڈ۔19پرکلینیکل مینجمنٹ گائیڈلائنزسے پلازماتھراپی کےخارج ہونےکاامکان

ذرائع نے سی این این نیوز18 بتایا کہ آئی سی ایم آر (Indian Council of Medical Research) نے مشاہدہ کیا کہ پلازما سے متعلق معلومات اور شواہد کو عالمی وبا کورونا وائرس (Covid-19) کے مریضوں کے لیے مددگار نہیں پایا گیاہے۔

  • Share this:
Plasma Therapy For Covid-19:پلازماتھراپی موثرنہیں،کووڈ۔19پرکلینیکل مینجمنٹ گائیڈلائنزسے پلازماتھراپی کےخارج ہونےکاامکان
ذرائع نے سی این این نیوز18 بتایا کہ آئی سی ایم آر (Indian Council of Medical Research) نے مشاہدہ کیا کہ پلازما سے متعلق معلومات اور شواہد کو عالمی وبا کورونا وائرس (Covid-19) کے مریضوں کے لیے مددگار نہیں پایا گیاہے۔

ہندوستان میں پلازما تھراپی (Plasma Therapy) کو کلینیکل مینجمنٹ پروٹوکول (clinical management protocol) سے خارج کیا جاسکتا ہے کیونکہ آئی سی ایم آر (ICMR) کے ماہر پینل نے پایا ہے کہ تھراپی کووڈ۔19 کے مریضوں کی شدید بیماری یا موت کی طرف بڑھنے کو کم کرنے میں فائدہ مند نہیں تھا۔


ذرائع نے سی این این نیوز18 بتایا کہ آئی سی ایم آر (Indian Council of Medical Research) نے مشاہدہ کیا کہ پلازما سے متعلق معلومات اور شواہد کو عالمی وبا کورونا وائرس (Covid-19) کے مریضوں کے لیے مددگار نہیں پایا گیاہے۔توقع کی جارہی ہے کہ انڈین کونسل آف میڈیکل ریسرچ اگلے کچھ دنوں میں اس بارے میں ایک تازہ ایڈوائزری جاری کرے گی۔


کووڈ۔19 کی روک تھام کے لیے ہندوستان کی قومی ٹاسک فورس (India’s national task force on COVID-19 management) کا اجلاس جمعہ 14 مئی کو سرس کوو 2 وائرس (Sars-Cov-2 virus) سے متاثرہ مریضوں کے لئے پلازما تھراپی کا جائزہ لینے کے لئے ہوا تھا۔ اعلی ماہرین نے ثبوت کے پروفائل کو دیکھا اور اس کا جائزہ لیا۔موجودہ رہنما خطوط ابتدائی اعتدال پسند بیماری کے مرحلے میں پلازما تھراپی کے "آف لیبل" کے استعمال کی اجازت دیتی ہیں، یعنی اگر اعلٰی ٹائٹر ڈونر پلازما (high-titre donor plasma) دستیاب ہو تو کووڈ۔19 علامتوں کے آغاز کے سات دن کے اندر اس کا استعمال کیا جاسکتا ہے۔


یہ بات علاج کے استعمال پر تشویش کے پس منظر میں سامنے آئی ہے اور اعلی سائنسدانوں اور صحت عامہ کے ماہرین کے ذریعہ اس کی افادیت پر شکوک و شبہات بھی کیے گئے ہیں۔

معالجین، سائنس دانوں اور صحت عامہ کے پیشہ ور 18 افراد کے ایک گروپ نے حال ہی میں حکومت کو خط لکھا تھا ، جس میں کہا گیا تھا کہ پلازما تھراپی کے "غیر معقول استعمال" سے سرس کوو 2 کے وائرس کی وجہ سے زیادہ وائرس تناؤ پیدا ہونے کا خدشہ پیدا ہوتا ہے۔

کنوولیسنٹ پلازما (Convalescent plasma) آئی سی ایم آر کے کلینیکل مینجمنٹ پروٹوکول کا ایک حصہ ہے جو وبائی امراض کے دوران ہوتا ہے۔ 17 نومبر 2020 کی ایک دستاویز میں آئی سی ایم آر نے کہا کہ ماضی میں وائرل انفیکشن کے علاج کے لیے تھراپی کی کوشش کی گئی ہے جیسے سوائن فلو (swine flu)، ایبولا (Ebola) اور سارس (Sars)۔ تاہم جسم نے اس کے اندھا دھند استعمال کے خلاف آگاہ بھی کیا ہے اور علاج کے لئے کچھ مخصوص معیارات پر تفصیل سے بتایا ہے۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: May 16, 2021 09:12 AM IST