உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    افغانستان کے حالات پر کل جماعتی میٹنگ کرے گا وزارت خارجہ، وزیر اعظم مودی نے دی بڑی ہدایت

    Afghanistan Crisis: وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے اس سے متعلق ٹوئٹ کرکے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے سبھی سیاسی جماعتون کے فلور لیڈرس کو افغانستان کے تازہ حالات کو لے کر مطلع کرنے کا حکم دیا ہے۔

    Afghanistan Crisis: وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے اس سے متعلق ٹوئٹ کرکے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے سبھی سیاسی جماعتون کے فلور لیڈرس کو افغانستان کے تازہ حالات کو لے کر مطلع کرنے کا حکم دیا ہے۔

    Afghanistan Crisis: وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے اس سے متعلق ٹوئٹ کرکے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے سبھی سیاسی جماعتون کے فلور لیڈرس کو افغانستان کے تازہ حالات کو لے کر مطلع کرنے کا حکم دیا ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: افغانستان (Afghanistan) پر طالبان (Taliban) کے قبضے کے بعد ابھرے حالات کو لے کر وزارت خارجہ پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں کے پارٹی لیڈروں کو جانکاری دے گا۔ وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے اس سے متعلق ٹوئٹ کرکے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے سبھی سیاسی جماعتون کے فلور لیڈرس کو افغانستان کے تازہ حالات کو لے کر مطلع کرنے کا حکم دیا ہے۔

      افغانستان میں طالبان کے قبضے کے بعد امریکہ، ہندوستان، برطانیہ جیسے کئی ملک وہاں پھنسے اپنے شہریوں کو طیارے کے ذریعہ نکال رہے ہیں۔ ہندوستان نے بھی وہاں پھنسے ہندوستانیوں کو نکالنے کے لئے روزانہ دو فلائٹ کابل سے ہندوستان کے لئے چلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ ہندوستان نے اس بات کی بھی یقین دہانی کرائی ہے کہ وہ افغانستان میں پھنسے ہندووں اور سکھوں کے علاوہ ضرورتمندوں کی بھی مدد کرے گا۔

      وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے ٹوئٹ میں کہا، ’افغانستان کے حالات کو دیکھتے ہوئے وزیر اعظم نریندر مودی نے وزارت خارجہ کو حکم دیا ہے کہ وہ اس سے متعلق سبھی سیاسی جماعتوں کے فلور لیڈرس کو جانکاری دے۔ وزیر برائے پارلیمانی امور اس بارے میں پوری تفصیلات پیش کریں گے۔ حالانکہ اس معاملے میں کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے سوال کھڑے کئے ہیں۔ انہوں نے ٹوئٹر پر ایس جے شنکر کے پوسٹ پر سوال کرکے پوچھا کہ وزیراعظم مودی اس موضوع پر کیوں کچھ نہیں بولیں گے۔

      وہیں افغانستان سے نکالے گئے ہندوستان کے 146 ہندوستانی شہری قطر کی راجدھانی دوحہ سے چار الگ الگ طیاروں کے ذریعہ پیر کو ہندوستان پہنچے۔ ان شہریوں کو امریکہ اور نارتھ اٹلانٹک ٹریٹی آرگنائزیشن (ناٹو) کے طیارہ کے ذریعہ گزشتہ کچھ دن میں کابل سے دوحہ لے جایا گیا تھا۔

      معاملے سے متعلق جانکاری رکھنے والے لوگوں نے بتایا کہ افغانستان پر طالبان کے قبضے کے بعد کشیدگی کے شکار ملک میں پھنسے اپنے شہریوں اور افغان شراکت داروں کو نکالنے کی ہندوستانی مہم کے تحت ان لوگوں کو دہلی لایا گیا۔ کابل میں نکاسی مہم شروع کرنے کے بعد دوحہ سے ہندوستان لایا گیا یہ ہندوستانیوں کا دوسرا گروپ ہے۔ اس سے پہلے اتوارکو دوحہ سے ایک خصوصی طیارہ کے ذریعہ 135 ہندوستانی دہلی پہنچے تھے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: