உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    آئندہ 1.5 سالوں میں 10لاکھ بھرتیاں کرے گی مرکزی حکومت، PM مودی نے سبھی محکموں کو دیا حکم

    پی ایم او انڈیا کے ٹوئٹر اکاونٹ سے ٹوئٹ کیا گیا ہے، ’وزیر اعظم نریندر مودی نے سبھی وزارت اور محکموں میں انسانی وسائل کا جائزہ لیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے حکم دیا ہے کہ آئندہ ڈیڑھ سالوں میں مشن موڈ میں 10 لاکھ بھرتیاں کی جائیں‘۔

    پی ایم او انڈیا کے ٹوئٹر اکاونٹ سے ٹوئٹ کیا گیا ہے، ’وزیر اعظم نریندر مودی نے سبھی وزارت اور محکموں میں انسانی وسائل کا جائزہ لیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے حکم دیا ہے کہ آئندہ ڈیڑھ سالوں میں مشن موڈ میں 10 لاکھ بھرتیاں کی جائیں‘۔

    پی ایم او انڈیا کے ٹوئٹر اکاونٹ سے ٹوئٹ کیا گیا ہے، ’وزیر اعظم نریندر مودی نے سبھی وزارت اور محکموں میں انسانی وسائل کا جائزہ لیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے حکم دیا ہے کہ آئندہ ڈیڑھ سالوں میں مشن موڈ میں 10 لاکھ بھرتیاں کی جائیں‘۔

    • Share this:
      نئی دہلی: روزگار کے پیش نظر اکثر اپوزیشن جماعتوں کے سوالوں کا سامنا کرنے والی مودی حکومت نے جواب دینے کا پلان تیارکرلیا ہے۔ مرکزی حکومت کے محکموں اور وزارتوں میں خالی عہدوں کو بھرنے کے لئے وزیر اعظم مودی نے مشن موڈ میں بھرتی مہم چلانے کا حکم دیا ہے۔ وزیر اعظم دفتر کی طرف سے دی گئی جانکاری کے مطابق، مرکزی حکومت آئندہ ڈیڑھ سالوں میں اپنے مختلف محکموں میں 10 لاکھ بھرتیاں کرے گی۔

      پی ایم او انڈیا کے ٹوئٹر اکاونٹ سے ٹوئٹ کیا گیا ہے، ’وزیر اعظم نریندر مودی نے سبھی وزارت اور محکموں میں انسانی وسائل کا جائزہ لیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے حکم دیا ہے کہ آئندہ ڈیڑھ سالوں میں مشن موڈ میں 10 لاکھ بھرتیاں کی جائیں‘۔ سبھی محکموں کو تیزی سے کارروائی کرنی ہوگی، جیسا کہ وزیر اعظم کے احکامات صاف ہے کہ طے وقت میں بھرتی کا عمل مکمل کرلیا جائے۔


      مرکز میں 2020 میں ہی خالی تھے قریب 9 لاکھ سرکاری عہدے

      مرکزی وزیر محکمہ عملہ اور تربیت ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے گزشتہ سال راجیہ سبھا میں ایک سوال کے جواب میں بتایا تھا کہ مرکزی حکومت کے مختلف محکموں میں یکم مارچ، 2020 تک 8.72 لاکھ عہدے خالی تھے۔ فی الحال یہ اعدادوشمار بڑھ گیا ہوگا۔ جتیندر سنگھ نے بتایا تھا کہ مرکزی حکومت کے تمام محکموں میں کل 40 لاکھ 4 ہزار عہدے ہیں، جن میں سے 31 لاکھ 32 ہزار عہدوں پر موجودہ وقت میں ملازم تعینات ہیں۔

      اس طرح 8.72 لاکھ عہدوں پر بھرتی کی ضرورت ہے۔ یہی نہیں 17-2016 سے 21-2020 کے دوران بھرتیاں کا اعدادوشمار دیتے ہوئے جتیندر سنگھ نے کہا تھا کہ ایس ایس سی کے ذریعہ منعقدہ امتحانات کے ذریعہ 2,14,601 ملازمین کی بھرتی ہوئی ہے۔ اس کے علاوہ آر آر بی کے ذریعہ 2,04,945 تقرریاں کی گئی ہیں۔ وہیں یوپی ایس سی نے 25,267 امیدواروں کا انتخاب کیا ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: