உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مودی نےڈبلیوایچ اوکےسربراہ ٹیڈروس سےکوویکسین کی منظوری کیلئےکی تھی سفارش! تب ملی اجازت!

    وزیر اعظم نریندر مودی کی ڈبلیو ایچ او کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس اذانوم گیبریئس سے ملاقات (فائل فوٹو)

    وزیر اعظم نریندر مودی کی ڈبلیو ایچ او کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس اذانوم گیبریئس سے ملاقات (فائل فوٹو)

    ذرائع کے مطابق وزیر اعظم نریندر مودی نے گزشتہ ہفتے منعقدہ جی 20 سربراہی اجلاس میں ڈبلیو ایچ او کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس اذانوم گیبریئس کے ساتھ ہندوستان کی پہلی دیسی کووڈ ویکسین کی منظوری کے لیے سفارش کی تھی۔

    • Share this:
      ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن (WHO) کی ایک مشاورتی کمیٹی نے بدھ کو بھارت بائیوٹیک Bharat Biotech کی کووڈ 19 ویکسین کوویکسین Covaxin کو ہنگامی استعمال کی فہرست (EUL) میں شمولیت کی منظٰوری دے دی ہے ۔

      ذرائع کے مطابق وزیر اعظم نریندر مودی Narendra Modi نے گزشتہ ہفتے منعقدہ G20 سربراہی اجلاس میں ڈبلیو ایچ او کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس اذانوم گیبریئس Tedros Adhanom Ghebreyesus کے ساتھ ہندوستان کی پہلی دیسی کووڈ ویکسین کی منظوری کے لیے زور دیا۔ مودی نے اپنے خطاب میں یہ بھی کہا کہ ہندوستان کورونا وبا کے خلاف جنگ میں دنیا کی مدد کرنے کے لئے اگلے سال کے آخر تک 5 بلین سے زیادہ کووڈ ویکسین کی خوراک تیار کرنے کے لئے پرجوش ہے۔
      اعداد و شمار کے مطابق کوویکسین Covaxin کورونا وائرس Covid-19 کے خلاف 77.8 فیصد تاثیر اور نئے ڈیلٹا ویرینٹ کے خلاف 65.2 فیصد تحفظ فراہم کرسکتا ہے۔


      اس سے قبل عالمی ادارہ صحت نے ایک ٹویٹ میں کہا کہ وہ بھارت بائیوٹیک سے COVAXIN کے حوالے سے ایک اضافی معلومات کی توقع کر رہا ہے۔ ہم جانتے ہیں کہ بہت سے لوگ کورونا ہنگامی استعمال کی فہرست میں Covaxin کو شامل کرنے کے لیے WHO کی سفارش کا انتظار کر رہے ہیں۔ ہنگامی استعمال کے لیے کسی پروڈکٹ کی سفارش کرنے سے پہلے ہمیں اس کا اچھی طرح جائزہ لینا چاہیے تاکہ یہ یقینی بنایا جا سکے کہ یہ محفوظ اور موثر ہے۔ دریں اثنا ایران، ماریشس، میکسیکو، نیپال، عمان اور یونان جیسے کئی ممالک نے کوواکسین کے ٹیکے لگائے جانے والے مسافروں کے داخلے کی منظوری دے دی ہے۔

      واضح رہے کہ عالمی ادارہ صحت WHO کے تکنیکی مشاورتی گروپ نے ایک اہم ہندوستان ویکسین کوویکسین Covaxin کو ہنگامی استعمال کے لیے اپنی منظوری دے دی ہے۔ جسے بھارت بائیوٹیک Bharat Biotech نے تیار کیا ہے۔ عالمی ادارہ صحت کا ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ اپنے ہنگامی استعمال کی فہرست (EUL) emergency use listing کے لیے ویکسین کو لائسنس دیتا ہے۔ اس نے 26 اکتوبر 2021 کو بھارت بائیوٹیک سے ای یو ایل کے لیے کوویکسین کی منظوری دینے سے قبل اضافی ڈیٹا طلب کیا تھا۔ اس پیشرفت سے واقف سرکاری ذرائع نے بتایا کہ کمپنی نے گزشتہ ہفتے ڈیٹا جمع کرایا تھا۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: