உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    PM مودی سے ملے روس کے وزیر خارجہ، 40 منٹ چلی میٹنگ میں دیا پوتن کا 'خاص میسیج'

    PM مودی سے ملے روس کے وزیر خارجہ، 40 منٹ چلی میٹنگ میں دیا پوتن کا 'خاص میسیج'

    PM مودی سے ملے روس کے وزیر خارجہ، 40 منٹ چلی میٹنگ میں دیا پوتن کا 'خاص میسیج'

    Sergey Lavrov India Visit: وزیر اعظم نے گزشتہ دو ہفتوں میں ہندوستان کے دورہ پر آئے برطانیہ ، چین ، آسٹریلیا ، گریس اور میکسیکو سمیت کسی بھی ملک کے وزیر سے عوامی طور پر ملاقات نہیں کی تھی ۔ ایسے میں روس کے وزیر خارجہ کے ساتھ وزیر اعظم مودی کی یہ ملاقات کافی اہم مانی جارہی ہے ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : یوکرین پر حملہ کو لے کر روس کے خلاف ہندوستان پر ایک موقف اختیار کرنے کیلئے بین الاقوامی دباو کے درمیان وزیر اعظم نریندر مودی نے جمعہ شام کو روس کے وزیر خارجہ سرگئی لاروف سے ملاقات کی ۔ وزیر اعظم مودی اور روس کے وزیر خارجہ کے درمیان یہ ملاقات 40 منٹ تک چلی ۔ وزیر اعظم نے گزشتہ دو ہفتوں میں ہندوستان کے دورہ پر آئے برطانیہ ، چین ، آسٹریلیا ، گریس اور میکسیکو سمیت کسی بھی ملک کے وزیر سے عوامی طور پر ملاقات نہیں کی تھی ۔ ایسے میں روس کے وزیر خارجہ کے ساتھ وزیر اعظم مودی کی یہ ملاقات کافی اہم مانی جارہی ہے ۔

      لاروف نے کہا تھا کہ وہ صدر ولادیمیر پوتن کی جانب سے وزیر اعظم مودی کو شخصی طور پر پیغام دینا چاہتے ہیں ۔ روسی وزیر خارجہ نے نامہ نگاروں سے کہا تھا کہ صدر (پوتن) اور وزیرا عظم مودی ایک دوسرے کے ساتھ لگاتار رابطے میں ہیں اور میں صدر کو اپنی بات چیت کے بارے میں رپورٹ کروں گا ۔ وہ جس طرح سے وزیر اعظم مودی کو احترام دیتے ہیں اور میں ذاتی طور پر اس پیغام کو دینے کے موقع کی سراہنا کرتا ہوں ۔

      یہ بھی پڑھئے : مہاراشٹر میں یہاں گوشت و مچھلی کی فروخت پر لگی روک، مقامی انتظامیہ کو کیوں لینا پڑا فیصلہ، جانئے


      خیال رہے کہ جنگ شروع ہونے کے بعد سے وزیر اعظم نریندر مودی ، روس کے صدر ولادیمیر پوتن سے ٹیلی فون پر 24 فروری ، دو مارچ اور سات مارچ کو بات چیت کرچکے ہیں ۔ وزیر اعظم مودی یوکرین کے صدر زیلینسکی سے بھی دو مرتبہ بات چیت کرچکے ہیں ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : کیاپاکستان کےوزیراعظم عمران خان کوقتل کرنےکی رچی جارہی ہےسازش ؟


      اس سے پہلے وزیر خارجہ ایس جے شنکر کے ساتھ بات چیت کے فورا بعد لاروف نے کہا کہ روس اپنے ساتھیوں اور شراکت داروں کے ساتھ دوطرفہ کاروبار کیلئے رکاوٹوں کو دور کرنے کے طریقے تلاش کررہا ہے ۔ لاروف نے کہا کہ ہندوستان کے ساتھ کاروبار کیلئے روپیہ ۔ روبیل سسٹم ماضی میں لاگو کیا گیا تھا اور اس کو مزید مضبوط کیا جاسکتا ہے ۔

      روس نے یوکرین بحران پر ہندوستان کے رخ کی تعریف کی

      رعایتی روسی تیل خریدنے کے نئی دہلی کے منصوبہ کے بارے میں پوچھے جانے پر لاروف نے کہا کہ ماسکو وہ کچھ بھی فراہم کرنے کیلئے تیار ہے ، جو ہندوستان خریدنا چاہتا ہے ۔ روس کے وزیر خارجہ نے یوکرین بحران پر ہندوستان کے رخ کی سراہنا کرتے ہوئے کہا کہ وہ ایک آزاد خارجہ پالیسی پر عمل کرتا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: