ہوم » نیوز » وطن نامہ

ہریانہ : بریانی کے معاملہ نے پھر زور پکڑا ، ایک طرف پنچایت تو دوسری طرف ریلی

مسلم اکثریتی علاقہ میوات علاقہ سے بریانی کے نمونے جمع کئے جانے اور ان میں بیف کی تلاش کئے جانے کا معاملہ ایک بار پھر گرماتا جا رہا ہے ۔

  • Pradesh18
  • Last Updated: Sep 16, 2016 09:20 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ہریانہ : بریانی کے معاملہ نے پھر زور پکڑا ، ایک طرف پنچایت تو دوسری طرف ریلی
مسلم اکثریتی علاقہ میوات علاقہ سے بریانی کے نمونے جمع کئے جانے اور ان میں بیف کی تلاش کئے جانے کا معاملہ ایک بار پھر گرماتا جا رہا ہے ۔

میوات :  مسلم اکثریتی علاقہ میوات علاقہ سے بریانی کے نمونے جمع کئے جانے اور ان میں بیف کی تلاش کئے جانے کا معاملہ ایک بار پھر گرماتا جا رہا ہے ۔ ایک طرف جہاں نوح میں اس کے خلاف پنچایت کی گئی تو دوسری طرف گئوركشكوں نے بھی ریلی نکال کر بریانی فروخت کر رہے لوگوں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ۔


میوات کے نوح علاقہ میں میوات وکاس سبھا نے پنچایت کی ۔ پنڈت دولت رام پجاری اجينا کی صدارت میں منعقدہ اس پنچایت میں کہا گیا کہ میوات کے اتحاد اور بھائی چارے کو توڑنے کی کوشش کی جا رہی ہے ، جو لوگ ایسا کر رہے ہیں ، ان کی سیاسی چال کو کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا ۔ پنچایت میں ہریانہ گئو سیوا کمیشن کے صدر بھانی رام منگلا کو برخاست کرنے اور بریانی کا نمونے لینے والوں پر مقدمہ درج کرنے کا بھی مطالبہ کیا گیا  ۔


اس موقع پر سماجی کارکن شبنم ہاشمی بھی موجود رہیں ۔ اس کے علاوہ ہریانہ اسمبلی کے سابق ڈپٹی اسپیکر آزاد محمد ، جاوید سوہنا ، اعجاز كاٹ پوری ، ولی محمد ، رشید احمد میو ، ڈاکٹر سبحان خان ، منوج سهراوت ، کپتان پریم سنگھ تومر، چودھری برج پال اہلاوت، بی جے پی اقلیتی مورچہ کے صدر اورنگزیب ، مفتی زاہد ، عمر پاڈلا ، رمضان چودھری ، ظفر كاٹ پوری ، شاہد ، جمیل گوروال اور حسن وغیرہ موجود تھے ۔


ادھر، اس کے برعکس گئو ركشكوں نے گڑگاؤں میں ریلی نکال کر ضلع انتظامیہ کے ذریعہ وزیر اعلی کو میمو بھیجا اور ان لوگوں پر سخت کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا جن کی بریانی میں بیف ملا تھا ۔ ایک گئو ركشك کلدیپ  نے کہا کہ حکومت بیف کی کھلے عام فروخت بند کرائے اور ملزموں پر کارروائی کرے ۔
First published: Sep 16, 2016 09:20 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading