உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Mansoon Session: تمام ممبران پارلیمنٹ سے PM Modiکی اپیل، ایوان میں کھلےذہن سےکریں بحث

    Youtube Video

    وزیر اعظم نریندر مودی(PM Narendra Modi) نے کہا کہ یہ دور بہت اہم ہے۔ یہ آزادی کے امرت میلے کا دور ہے۔ 15 اگست اور آنے والے 25 سال ایک خاص اہمیت رکھتے ہیں۔ جب قوم آزادی کے 100 سال کا جشن منائے گی، یہ وقت ہوگا کہ ہم اپنا سفر شروع کریں اور نئی بلندیوں کو چھونے کا عزم کریں۔

    • Share this:
      نئی دہلی: پارلیمنٹ کا مانسون اجلاس(Parliament Mansoon Session) آج سے شروع ہو رہا ہے۔ اس میں شرکت کے لیے پیر کی صبح پارلیمنٹ ہاؤس(Parliament House) پہنچے وزیر اعظم نریندر مودی(PM Narendra Modi) نے کہا کہ یہ دور بہت اہم ہے۔ یہ آزادی کے امرت میلے کا دور ہے۔ 15 اگست اور آنے والے 25 سال ایک خاص اہمیت رکھتے ہیں۔ جب قوم آزادی کے 100 سال کا جشن منائے گی، یہ وقت ہوگا کہ ہم اپنا سفر شروع کریں اور نئی بلندیوں کو چھونے کا عزم کریں۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ پارلیمنٹ میں کھلے ذہن سے بات چیت ہونی چاہیے، ضرورت پڑنے پر اہم معاملوں پر بحث بھی ہونی چاہیے۔

      وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا، میں تمام ممبران پارلیمنٹ سے گہرائی سے سوچنے اور بحث حصہ لینے کی درخواست کرتا ہوں۔ پی ایم نے کہا کہ پارلیمنٹ کا یہ اجلاس اس لیے بھی اہم ہے کیونکہ صدر اور نائب صدر کے عہدوں کے لیے انتخابات ہو رہے ہیں۔ آج (صدارتی انتخاب کے لیے) ووٹنگ جاری ہے۔ اس دوران نئے صدر اور نائب صدر ملک کی رہنمائی کرنا شروع کر دیں گے۔ آپ کو بتا دیں کہ مانسون سیشن 18 جولائی سے شروع ہوگا اور 12 اگست تک جاری رہے گا۔ صدارتی انتخاب کے لیے آج پارلیمنٹ میں بھی ووٹنگ ہو رہی ہے جس میں تمام ممبر پارلیمنٹ ووٹ دیں گے۔ نائب صدر کا انتخاب 6 اگست کو ہونا ہے۔


      مانسون اجلاس کے آج پہلے دن اپوزیشن پارٹیاں اگنی پتھ اسکیم، قیمتوں میں اضافہ اور 'غیر پارلیمانی الفاظ' کی فہرست پر حکومت کو گھیرنے کی کوشش کر سکتی ہیں۔ حکومت کی طرف سے ایک دن پہلے بلائی گئی آل پارٹی میٹنگ کے علاوہ، اپوزیشن پارٹیوں کے لیڈروں نے سیشن کی منصوبہ بندی کے لیے دہلی میں این سی پی سربراہ شرد پوار کی رہائش گاہ پر ملاقات کی۔ پارلیمنٹ کے مانسون اجلاس کے آغاز سے ایک دن پہلے، حکومت نے اتوار کو کہا کہ مختلف محکموں کی طرف سے 32 بلوں کو دونوں ایوانوں میں متعارف کرانے کا اشارہ دیا گیا ہے، جن میں سے 14 تیار ہیں۔ حکومت نے اصرار کیا کہ وہ چاہتی ہے کہ ان تمام بلوں پر ایوان میں جمہوری انداز میں بحث کی جائے۔

      یہ بھی پڑھیں

      مانسون اجلاس میں 32 بل ایوان میں پیش کیے جائیں گے


      کل جماعتی میٹنگ کے بعد پارلیمانی امور کے وزیر پرہلاد جوشی نے کہا کہ ان 32 بلوں میں سے کچھ پر پارلیمنٹ کی اسٹینڈنگ کمیٹیوں نے پہلے ہی بحث کی ہے۔ صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ کے اس اجلاس میں مختلف محکموں کی جانب سے 32 بل پیش کرنے کا ارادہ ہے۔جن میں سے 14 بل تیار ہیں۔ لیکن ہم بحث کے بغیر بل پاس نہیں کریں گے۔ پرہلاد جوشی نے کہا کہ حکومت نے کل جماعتی اجلاس(All Party Meeting) میں تقریباً 45 جماعتوں کو مدعو کیا تھا، جن میں سے 36 نے شرکت کی۔ وزارت خارجہ اور خزانہ نے منگل کو پارلیمنٹ میں مختلف سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں کو سری لنکا کی صورتحال کے بارے میں آگاہ کیا، حکام نے بتایا کہ معلومات دیں گے۔
      Published by:Mirzaghani Baig
      First published: