جموں وکشمیرایکٹ کوصدرجمہوریہ کی منظوری، تقسیم 31 اکتوبرکو

جموں وکشمیرریاست آئندہ 31 اکتوبرکودومرکزکے زیرانتظام ریاستوں جموں وکشمیراورلداخ میں تقسیم ہوجائےگی۔

Aug 10, 2019 12:09 AM IST | Updated on: Aug 10, 2019 12:10 AM IST
جموں وکشمیرایکٹ کوصدرجمہوریہ کی منظوری، تقسیم 31 اکتوبرکو

صدرجمہوریہ رام ناتھ کووند نےجمعہ کوجموں وکشمیر تشکیل نو ایکٹ 2019کو اپنی منظوری دے دی۔

نئی دہلی: جموں وکشمیرریاست آئندہ 31اکتوبرکودومرکزکے زیرانتظام ریاستوں جموں  وکشمیراورلداخ میں تقسیم ہوجائےگی۔ صدررام ناتھ کووند نے جمعہ کوجموں وکشمیرتشکیل نوایکٹ 2019کو اپنی منظوری دے دی۔ ایکٹ میں ریاست کودومرکزکے زیرانتظام ریاستوں جموں وکشمیراورلداخ میں تقسیم کرنے کا التزام ہے۔

جموں وکشمیر میں اسمبلی ہوگی جبکہ لداخ میں اسمبلی نہیں ہوگی۔ اس کے فوراََ بعد وزارت داخلہ نے ایک نوٹفکیشن جاری کرکے تقسیم کی تاریخ 31اکتوبر طے کردی۔ ایکٹ کے مطابق نو تشکیل شدہ مرکز کے زیرانتظام ریاست لداخ میں کرگل اور لیہہ اضلاع کو شامل کیا جائےگا جبکہ موجودہ ریاست کے دیگر 12ضلع مرکز کے زیرانتظام ریاست جموں وکشمیر کا حصہ بنیں گے۔

Loading...

جموں وکشمیر میں اس وقت لوک سبھا کی چھ سیٹیں ہیں۔ تقسیم کے بعد مرکز کے زیرانتظام ریاست جموں وکشمیرمیں پانچ اور مرکز کے زیرانتظام ریاست لداخ میں ایک لوک سبھا سیٹ ہوگی۔ دونوں مرکزکے زیرانتظام ریاستوں میں اب گورنر کی جگہ لیفٹننٹ گورنر ہوں گے۔

Loading...