ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

وزیر اعظم مودی نے ملک کی پہلی سی پلین سروس کو دکھائی ہری جھنڈی ، کیوڑیا سے سابرمتی تک بھری اڑان

اس سروس کے لئے ہوابازی شعبہ کی پرائیویٹ کمپنی اسپائس جیٹ 19 سیٹوں والے ایک طیارہ کا استعمال کررہی ہے ، جس میں شروعات میں 12 سیٹوں کا استعمال کیا جارہا ہے ۔ یہ کیوڑیا او ر احمد آباد کے درمیان تقریباً 200 کلومیٹر کی دوری سڑک کے راستے کی مسافت 4 گھنٹے کی بجائے صرف 45 منٹ میں طے گا ۔

  • UNI
  • Last Updated: Oct 31, 2020 05:17 PM IST
  • Share this:
وزیر اعظم مودی نے ملک کی پہلی سی پلین سروس کو دکھائی ہری جھنڈی ، کیوڑیا سے سابرمتی تک بھری اڑان
وزیر اعظم مودی نے ملک کی پہلی سی پلین سروس کو دکھائی ہری جھنڈی ، کیوڑیا سے سابرمتی تک بھری اڑان

وزیراعظم نریندر مودی نے آج اپنی آبائی ریاست گجرات کے نرمدا ضلع کے کیوڑیا، جہاں دنیا کاسب سے اونچا مجسمہ اسٹیچو آف یونیٹی ہے، سے احمد آباد کے سابرمتی ریورفرنٹ کے درمیان پرواز کرکے ملک کی پہلی سی پلین سروس کی باقاعدہ شروعات کی ۔ وزیر اعظم مودی نے سردار ولبھ بھائی پٹیل کے 145 ویں یوم پیدائش پر ان کے 182 میٹر اونچے مجسمہ پر گلہائے عقیدت اور منوہری ایکتا پریڈ کا معائنہ کرنے کے بعد تالاب نمبر3 پر واقع ووٹر ایروڈروم سے پرواز کرکے اس سروس کی شروعا ت کی ۔ جب وہ پہاڑیوں سے گھرے اس ہوائی اڈے سے جہاز پر سوار ہونے والے تھے ، اس سے پہلے انہیں عملہ کے رکن نے ایمرجنسی سیکورٹی سے متعلق معلومات دی اور انہوں نے اسے غور سے سنا ۔


اس سروس کے لئے ہوابازی شعبہ کی پرائیویٹ کمپنی اسپائس جیٹ 19 سیٹوں والے ایک طیارہ کا استعمال کررہی ہے ، جس میں شروعات میں 12 سیٹوں کا استعمال کیا جارہا ہے ۔ یہ کیوڑیا او ر احمد آباد کے درمیان تقریباً 200 کلومیٹر کی دوری سڑک کے راستے کی مسافت 4 گھنٹے کی بجائے صرف 45 منٹ میں طے گا ۔



مرکزی حکومت کی اڑان یوجنا کے تحت شرو ع ہونے والی اس یوجنا کے لئے اسی سال جولائی میں مرکز ، ریاست او ر ایئرپورٹ اتھارٹی آف انڈیا کے مابین سہ طرفہ معاہدہ ہوا تھا ۔

اسٹیچو آف یونیٹی اور احمد آباد کی سابرمتی ندی ریورفرنٹ دونوں وزری اعظم مودی کے ڈریم پروجیکٹ رہے ہیں ۔ سرکاری اطلاع کے مطابق شروعات میں دونوں کے مابین سی پلین سروس کے دو روزہ پھیرے رکھنے کا منصوبہ ہے اور اس کا کرایہ فی شخص 1500 روپے ایک طرف کا ہوگا ۔

پانی اور زمین دونوں سے پرواز کے قابل اس طیارہ کو کناڈا میں بنایا گیا ہے اور اسے اسپائس جیٹ مالدیپ سے خرید کر یہاں لایا گیا ہے ۔ عام طیارہ کے مقابلہ میں کافی نیچے پرواز کرنے والے اس طیارہ کا وزن 3377 کلوہے اور یہ 5570 کلو وزن اٹھا سکتا ہے۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Oct 31, 2020 05:16 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading