مودی حکومت کی پالیسوں کےخلاف ناندیڑ میں مظاہرہ ، انتخابی وعدوں سے انحراف کا الزام

سب کا ساتھ سب کا وکاس کا خوش نما نعرہ دیکر اقتدار حاصل کرنے والی مودی حکومت پر اپنے انتخابی وعدوں سے مکرنے کے الزامات عائد کئے جارہے ہیں

Feb 28, 2018 11:16 PM IST | Updated on: Feb 28, 2018 11:16 PM IST
مودی حکومت کی پالیسوں کےخلاف ناندیڑ میں مظاہرہ ، انتخابی وعدوں سے انحراف کا الزام

ناندیڑ : سب کا ساتھ سب کا وکاس کا خوش نما نعرہ دیکر اقتدار حاصل کرنے والی مودی حکومت پر اپنے انتخابی وعدوں سے مکرنے کے الزامات عائد کئے جارہے ہیں اور انہیں الزامات کے تحت مودی حکومت کے خلاف ملک بھر میں احتجاج کیا جا رہا ہے۔ ناندیڑ میں بھی مختلف سیاسی جماعتوں اورسماجی تنظیموں کی جانب سے دفتر ضلع کلکٹر کے سامنے احتجاجی دھرنے کا انعقاد کیا گیا۔

مظاہرین نے کھیتوں میں کام کرنے والے مزدرور کسانوں کو پنشن جاری کرنے، طلبہ کو اسکالرشپ دینے اور سرکاری اسکولوں کو بند کرنےسےمتعلق مہاراشٹر کی ریاستی حکومت کی جانب سے لیےگئے فیصلہ کو واپس لینےکا بھی مطالبہ کیا ہے۔ مظاہرین میں کثیر تعداد میں کسان ، مزدور مرد و خواتین شریک تھے ۔

سماجی تنظیم مومنٹ فار پیس اینڈ جسٹس نے بھی مظاہرے میں شرکت کی اور حکومت کی عوام مخالف پالیسوں کےخلاف برہمی ظاہر کی۔ مطاہرین نے حکومت مخالف نعرے بھی لگائے۔ مظاہرہ کے اختتام پرمختلف سیاسی وسماجی تنظیموں کے نمائندوں کے وفد نے ضلع کلکٹر کو ایک میمورنڈم بھی پیش کیا ۔

Loading...

Loading...