உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    The Kashmir Files کے ڈائریکٹر ویویک اگنی ہوتری کے خلاف احتجاج، مختلف سیاسی جماعتوں نے کیا یہ بڑا مطالبہ

    The Kashmir Files کے ڈائریکٹر ویویک اگنی ہوتری کے خلاف احتجاج

    The Kashmir Files کے ڈائریکٹر ویویک اگنی ہوتری کے خلاف احتجاج

    ’دی کشمیر فائلس‘ فلم کو لے کر ویویک اگنی ہوتری سرخیوں میں تو تھے ہی، ان کے بیان سے ایک اور تنازعہ کھڑا ہوگیا ہے۔ اپنے بیان میں ویویک اگنی ہوتری کے ذریعہ بھوپال کے لوگوں کو ہم جنس پرست بتانے کے خلاف سیاسی جماعتوں کے ساتھ بھوپال رکن اسمبلی عارف مسعود نے بھی اپنے سخت رد عمل کا اظہار کیا ہے۔

    • Share this:
    بھوپال: ’دی کشمیر فائلس‘ فلم کو لے کر ویویک اگنی ہوتری سرخیوں میں تو تھے ہی، ان کے بیان سے ایک اور تنازعہ کھڑا ہوگیا ہے۔ اپنے بیان میں ویویک اگنی ہوتری کے ذریعہ بھوپال کے لوگوں کو ہم جنس پرست بتانے کے خلاف سیاسی جماعتوں کے ساتھ بھوپال رکن اسمبلی عارف مسعود نے بھی اپنے سخت رد عمل کا اظہار کیا ہے۔ عارف مسعود نے جہاں ویویک اگنی ہوتری سے ان کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کی وضاحت کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ وہیں سماجوادی پارٹی نے بھی ویویک اگنی ہوتری کے بیان کو شرمسار کرنے والا بتایا ہے۔
    ’دی کشمیر فائلس‘ فلم کے ڈائریکٹر ویویک اگنی ہوتری کا تعلق مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال سے ہے۔ ویویک اگنی ہوتری کی تعلیم و تربیت بھی بھوپال میں ہوئی ہے۔ دی کشمیر فائلس میں جہاں ان کے ڈائریکشن اور فلم سے متعلق متضاد نظریات سامنے آرہے تھے وہیں جب ان کا بیان بھوپال کے حوالے سامنے آیا تو لوگوں کی حیرت کی انتہا نہیں رہی۔ ویویک اگنی ہوتری نے اپنے بیان میں کہا کہ بھوپال میں پڑھا ہوا ہوں، لیکن بھوپالی نہیں ہوں کیونکہ بھوپالی ہونے کا ایک الگ مطلب ہوتا ہے اور اسے میں آپ کو اکیلے میں سمجھاؤں گا۔ کسی بھوپالی سے پوچھئے گا۔ کیونکہ جو بھوپالی ہیں، اس کا مطلب  عام طور پر ہوتا ہے کہ یہ ہومو سیکس ہے، نوابی شوق کا مطلب ہوتا ہے۔

    عارف مسعود نے جہاں ویویک اگنی ہوتری سے ان کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کی وضاحت کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔
    عارف مسعود نے جہاں ویویک اگنی ہوتری سے ان کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کی وضاحت کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔


    وہیں ویویک اگنی ہوتری کے بیان پر بھوپال میں این ایس یو آئی کے کارکنان نے احتجاج کرتے ہوئے ان کا پتلا نذر آتش کیا اور ویویک اگنی ہوتری سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیا۔ بھوپال ایم ایل اےعارف مسعود نے ویویک اگنی ہوتری کے بیان پر اپنے سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اگنی ہوتری بے بنیاد چیزوں پر فلم بناکر عوام کو سچ بتانا چاہتے ہیں۔ اب انہوں نے ایک اور بیان دیکر بھوپال کو بدنام کرنے کی کوشش کی ہے۔

    یہ بھی پڑھیں۔

    IPL 2022: ایم ایس دھونی کی ٹرپل سنچری، کوہلی 200 سے چوکے، روہت شرما کی نظر بڑے ریکارڈ پر

    وہ کہتے ہیں کہ بھوپالی ہومو سیکس میں شامل رہتے ہیں۔ یہ اپنا درد بیان کر رہے ہیں تو یہ واضح طور پربتائیں کہ یہ کام کس کے ساتھ ہوا ہے۔ کیونکہ میں بھی برو کاٹ بھوپالی ہوں اور بھوپال میں پیدا ہوا ہوں اور میں جاننا چاہتا ہوں اور میرے علاوہ بہت سارے بھارتیہ جنتا پارٹی کے لیڈر ہیں، جو اپنی تقریروں میں کہتے ہیں کہ میں بروکاٹ بھوپالی ہوں اور بھی دوسرے سیاسی، سماجی اور ادب سے وابستہ لوگ ہیں، جنہوں نے ملک و بیرون ملک میں بھوپال کا نام روشن کیا۔ ہم لوگوں نے کبھی ایسا نہ دیکھا اور نہ ہی سنا۔ ان کے ساتھ جو واقعہ پیش  آیا ہے تو ان کو بتاناچاہئے تھا کہ اس وقت اگر پولیس نے ساتھ نہیں دیا تو ہم ابھی وعدہ کرتے ہیں کہ ان کے ساتھ جس نے ایسا مجرمانہ فعل کیا ہے، ہم ان کے حق کے لئے ان کے ساتھ مل کر لڑائی لڑیں گے۔ برائے مہربانی اگنی ہوتری جی بھوپال کو بدنام مت کرو، پیسہ کمانے کے لئے ملک میں نفرت مت بانٹو۔

    وہیں سماجوادی پارٹی کے ترجمان یش یادو کہتے ہیں کہ ویویک اگنی ہوتری کا کردار شروع سے ہی داغدار رہا ہے۔ یہ نہ صرف خواتین  کے مخالف ہیں بلکہ سماج دشمن عناصر ہیں۔ انہوں نے بھوپال سے متعلق جو بیان دیا ہے، وہ شرمناک ہے۔ پورا بھوپال شرمسار ہے۔ وہیں وزیر اعلی آج ان کے ساتھ تفریح کر رہے تھے اور شجرکاری کر رہے تھے۔ ایسے لوگ جو ذہنی دیوالیہ پن کا شکار ہیں، ان سے دور رہنا چاہئے۔ ہاں ایک بات یہ ضرور ہے کہ ان کا تعلق جس نظریہ کے لوگوں سے ہے وہاں پر یہ فعل ضرور ہوتا ہے۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: