ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

پڈوچیری : کانگریس کو لگا پانچواں جھٹکا ، فلور ٹیسٹ سے پہلے ممبر اسمبلی نے دیا استعفی ، بتائی یہ وجہ

کانگریس کے پاس اب اسمبلی اسپیکر سمیت نو اراکین اسمبلی ہیں اور ایک آزاد رکن اسمبلی کی حمایت حاصل ہے ۔ اپوزیشن کے پاس کے اے آئی این آر سی کے سات ، اے آئی اے ڈی ایم کے کے چار کے اور بی جے پی کے تین اراکین اسمبلی (نامزد اراکین) ہیں

  • UNI
  • Last Updated: Feb 21, 2021 07:07 PM IST
  • Share this:
پڈوچیری : کانگریس کو لگا پانچواں جھٹکا ، فلور ٹیسٹ سے پہلے ممبر اسمبلی نے دیا استعفی ، بتائی یہ وجہ
پڈوچیری : کانگریس کو لگا پانچواں جھٹکا ، فلور ٹیسٹ سے پہلے ممبر اسمبلی نے دیا استعفی ۔ تصویر : ANI

پڈوچیری : پڈوچیری میں حکمران جماعت کانگریس کو شدید دھچکا دیتے ہوئے ایک مزید رکن اسمبلی لکشی نارائنن نے اتوار کے روز استعفیٰ دے دیا ، جس کی وجہ سے پارٹی کے لئے پیر کو ایوان میں اکثریت ثابت کرنا بہت مشکل ہو گیا ہے ۔ کانگریس سے استعفیٰ دینے والے پانچویں رکن اسمبلی لکشمی نارائنن نے اسمبلی اسپیکر شیوکولانتھو کو اپنا استعفیٰ سو نپتے ہوئے کہا ہے کہ وہ آج (اتوار) کو اپنے عہدے سے استعفی دے رہے ہیں ۔


کانگریس کے پاس اب اسمبلی اسپیکر سمیت نو اراکین اسمبلی ہیں اور ایک آزاد رکن اسمبلی کی حمایت حاصل ہے ۔ اپوزیشن کے پاس کے اے آئی این آر سی کے سات ، اے آئی اے ڈی ایم کے کے چار کے اور بی جے پی کے تین اراکین اسمبلی (نامزد اراکین) ہیں۔ پڈوچیری میں کل اسمبلی کی کل 33 سیٹیں ہیں ، جن میں سے 30 پرانتخابات ہوتے ہیں ، جبکہ تین نامزد اراکین ہوتے ہیں ۔ کانگریس نے 2016 کے اسمبلی انتخابات میں 15 نشستیں حاصل کی تھیں ۔


واضح ر ہے کہ لیفٹیننٹ گورنر تملی سائی سندراراجن نے وزیر اعلی وی نارائن سامی کو 22 فروری بروز پیر کو اسمبلی کے فلور ٹیسٹ میں اپنی اکثریت ثابت کی ہدایت دی ہے ۔ اکثریت حاصل کرنے سے ایک دن پہلے ایک اور ممبر اسمبلی کے استعفی سے حکومت کیلئے مشکلات پیدا ہوگئی ہیں اور اکثریت ثابت کرنے کی راہ مزید دشوار ہوگئی ہے ۔


حزب اختلاف کے لیڈر این رنگا سامی کے ساتھ اے آئی اے ڈی ایم کے قانون ساز پارٹی کے لیڈر انباجگن اور وی سامی ناتھن (بی جے پی کے نامزد رکن) نے 18 فروری کو لیفٹیننٹ گورنر سے ملاقات کر کے مطالبہ کیا کہ ریاستی حکومت اقلیت میں ہے ، اس لئے اسے اپنی اکثریت ثابت کرنے کی ہدایت جاری کی جائے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Feb 21, 2021 07:07 PM IST