ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

زرعی قوانین کے خلاف سپریم کورٹ جائے گی پنجاب حکومت ، وزیر اعلی نے کہا : پاکستان اٹھاسکتا ہے حالات کا فائدہ

زرعی قوانین کے خلاف دھرنے پر بیٹھے وزیر اعلی امریندر سنگھ نے کہا کہ حکومت کے پاس ایسا کوئی اختیار نہیں ہے کہ وہ زرعی امور میں کوئی قانون لائے کیونکہ یہ ریاستوں کا معاملہ ہے اور ہم اس کے خلاف عدالت جائیں گے ۔

  • Share this:
زرعی قوانین کے خلاف سپریم کورٹ جائے گی پنجاب حکومت ، وزیر اعلی نے کہا : پاکستان اٹھاسکتا ہے حالات کا فائدہ
زرعی قوانین کے خلاف سپریم کورٹ جائے گی پنجاب حکومت ، وزیر اعلی نے کہا : پاکستان اٹھاسکتا ہے حالات کا فائدہ

مرکزی حکومت کی جانب سے پارلیمنٹ میں پاس کرائے گئے تین زرعی بلوں کو اتوار کو صدر جمہوریہ رامناتھ کووند نے منظوری دیدی ہے ۔ اس کے بعد یہ قانون بن گئے ہیں ۔ ملک بھر میں اپوزیشن پارٹیاں اور کسان اس قانون کی مخالفت کررہے ہیں ۔ اس درمیان پنجاب کے وزیر اعلی کیپٹن امریندر سنگھ نے کہا ہے کہ ان کی حکومت زرعی قوانین کے خلاف سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹائے گی ۔ پارلیمنٹ میں گزشتہ ہفتہ پاس ہوئے زرعی بلوں کے خلاف کسان اور اپوزیشن پارٹیاں ملک بھر میں احتجاج کررہی ہیں ۔


زرعی قوانین کے خلاف جاری احتجاج پر وزیر اعلی امریندر سنگھ کہا کہ پاکستان کی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی ملک کے موجودہ حالات کا فائدہ اٹھاسکتی ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ کسان آئی ایس آئی کیلئے آسان شکار ہوسکتے ہیں ۔ پیر کو کھٹکر کلاں میں ان قوانین کے خلاف دھرنے پر بیٹھے وزیر اعلی امریندر سنگھ نے کہا کہ حکومت کے پاس ایسا کوئی اختیار نہیں ہے کہ وہ زراعت سے وابستہ کوئی قانون لائے ، کیونکہ یہ ریاستوں کا معاملہ ہے اور اس کے خلاف ہم عدالت جائیں گے ۔




وزیر اعلی کیپٹن امریندر سنگھ نے کہا کہ مرکزی حکومت زراعت کو نہیں سمجھتی ہے ، اس لئے وہ یہ نہیں سمجھ پا رہی ہے کہ کسان کس لئے احتجاج کررہے ہیں ۔ پنجاب کے غریب کسان پورے ملک کا پیٹ بھرتے ہیں ، کیا مرکزی حکومت ہر شہری کا پیٹ بھرنے کی ذمہ داری لے سکتی ہے ۔

وزیر اعلی نے اس سے پہلے کہا تھا کہ ریاستی حکومت مستقبل کے اقدامات کیلئے قانون اور زراعت کے ماہرین کے ساتھ ایسے سبھی لوگوں سے تبادلہ خیال کررہی ہے ، جو مرکز کے نقصاندہ قوانین سے متاثر ہوں گے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Sep 28, 2020 02:08 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading