உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    نابالغ کو معاشقہ کے جال میں پھنسایا، اغوا کرکے دہلی لے گیا، شادی کی... پھر قتل کر دیا، جانیں پورا معاملہ

    Bihar Crime News: پورنیہ میں ایک نابالغ لڑکی کو پھنسا کر اغوا کئے جانے اور شادی کرنے کے بعد اس کے قتل کا سنسنی خیز معاملہ سامنے آیا ہے۔ اہل خانہ کے الزام کے مطابق، ملزم پہلے سے شادی شدہ ہے اور اس نے جان بوجھ کر معاشقہ کے جال میں پھیلایا اور نابالغ کو اپنے قبضے میں کرنے کے بعد اس حادثے کو انجام دیا۔

    Bihar Crime News: پورنیہ میں ایک نابالغ لڑکی کو پھنسا کر اغوا کئے جانے اور شادی کرنے کے بعد اس کے قتل کا سنسنی خیز معاملہ سامنے آیا ہے۔ اہل خانہ کے الزام کے مطابق، ملزم پہلے سے شادی شدہ ہے اور اس نے جان بوجھ کر معاشقہ کے جال میں پھیلایا اور نابالغ کو اپنے قبضے میں کرنے کے بعد اس حادثے کو انجام دیا۔

    Bihar Crime News: پورنیہ میں ایک نابالغ لڑکی کو پھنسا کر اغوا کئے جانے اور شادی کرنے کے بعد اس کے قتل کا سنسنی خیز معاملہ سامنے آیا ہے۔ اہل خانہ کے الزام کے مطابق، ملزم پہلے سے شادی شدہ ہے اور اس نے جان بوجھ کر معاشقہ کے جال میں پھیلایا اور نابالغ کو اپنے قبضے میں کرنے کے بعد اس حادثے کو انجام دیا۔

    • Share this:
      پورنیہ: معاشقہ میں پھنساکر شادی کرنے اور اس کے چند ماہ بعد ہی لڑکی کا قتل کئے جانے کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ قتل کا معاملہ کٹیہار ضلع کے تیلتا تھانہ کے بالو گنج تھانہ علاقے کا ہے، جبکہ نابالغ لڑکی کا مائیکہ پورنیہ کے بیاسی تھانہ ہاتھی بندھا گاوں میں ہے۔ موصولہ اطلاع کے مطابق، مائیکے والوں نے قتل کی ایف آئی آر درج کرائی ہے۔

      الزام کے مطابق، چمن نوری کو ان کے عاشق اقبال نے پہلے اپنے معاشقہ کے جال میں پھنسایا پھر دو ماہ میں ہی سسرال والوں نے مل کر معشوقہ کا قتل کرکے لاش کو پھانسی کے پھندے سے لٹکا دیا۔ حادثہ کٹیہار ضلع کے تیلتا تھانہ کے بالو گنج کی ہے۔ جمعہ کے روز جیسے ہی چمن کی لاش ان کے گاوں ہاتھی بندھا پہنچا تو اہل خانہ میں کہرام مچ گیا۔

      مہلوک چمک نوری کے بھائی افسر عالم اور ماں عارفہ خاتون نے کہا کہ دو ماہ پہلے کمہروا کا باشندہ اقبال، ان کی بہن چمن نوری کو معاشقہ کے جال میں پھنسا کر بھگا لے گیا تھا۔ رات میں ان لوگوں کو اطلاع ملی کہ بالو گنج میں اپنی خالہ کے گھر میں چمن کا قتل کرکے اسے پھانسی کے پھندے سے لٹکا دیا ہے۔

      مہلوک کے بھائی نے مزید بتایا کہ جب وہ لوگ وہاں پہنچے تو دیکھا کہ چمن کی لاش پھانسی کے پھندے سے لٹکا ہوا تھا اور گھٹنا مڑا ہوا زمین سے سٹا تھا۔ جیسے ہی وہ لوگ پہنچے کہ اقبال اور اس کے اہل خانہ وہاں سے بھاگنے لگے۔ اس کی اطلاع اس نے تیلتا پولیس کو دی۔ اس کے بعد پولیس موقع پر پہنچ کر جانچ میں مصروف ہوگئی ہے۔ لاش کے پوسٹ مارٹم کے بعد اسے بائسی کے ہاتھی بندھا لایا گیا۔

      اہل خانہ نے بتایا کہ لڑکا اقبال پہلے سے شادی شدہ ہے۔ اس کی پہلی بیوی ببلی خاتون ہے۔ وہ بجلی وائرنگ کا کام کرتا تھا۔ وائرنگ کے دوران ہی لڑکی کے گاوں میں آتا تھا۔ اسی دوران لڑکی سے اس کا رابطہ ہوا۔ دھیرے دھیرے اسے اپنے معاشقہ کے جال میں پھنسا کر دو ماہ پہلے چمن نوری کو اغوا کرلیا۔ اسے پہلے دہلی لے گیا، پھر دہلی سے واپس آکر اپنے خالہ انوری خاتون کے گھر پر رکا۔ جہاں بدھ کی شام اس کا قتل کردیا گیا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: