ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

شرمناک ! 22 سال کے نوجوان نے 8 سال کی معصوم بچی کی آبروریزی کی ، اس طرح کھلا راز

راجستھان کے باراں ضلع میں آٹھ سال کی ایک بچی کی آبروریزی کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔

  • Share this:
شرمناک ! 22 سال کے نوجوان نے 8 سال کی معصوم بچی کی آبروریزی کی ، اس طرح کھلا راز
پوکسو ایکٹ کی دفعہ 7 اور 8 کے تحت وہ معاملے آتے ہیں جن میں بچوں کے پرائیویٹ پارٹ سے چھیڑ چھاڑ کی جاتی ہے۔ اس کی دفعہ کے مجرموں کو قصوروار ثابت ہوجانے پر 5 سے 7 سال تک کی سزا اور جرمانہ ہوسکتا ہے۔علامتی تصویر

راجستھان کے باراں ضلع میں آٹھ سال کی ایک بچی کی آبروریزی کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ گاوں کے رہنے والے 22 سال کے نوجوان نے اس معصوم کو اپنی ہوس کا شکار بنایا ۔ واقعہ کے بعد متاثرہ کے اہل خانہ نے ملزم کے خلاف معاملہ درج کرایا ہے ۔ وہیں پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے ملزم نوجوان کو گرفتار کرلیا ہے ۔ فی الحال پولیس ملزم سے پوچھ گچھ کرکے معاملہ کی تفتیش میں مصروف ہے ۔


یہ واقعہ ضلع کے کوائی گاوں میں پیش آیا ، جہاں گاوں کے ہی رہنے والے ایک نوجوان نے 8 سال کی بچی کی آبروریزی کی واردات کو انجام دیا ۔ اطلاعات کے معصوم بچی کے والدین مزدوری کرنے کیلئے گئے ہوئے تھے اور بچی گھر پر تنہا تھی ۔ اس دوران ملزم نے گھر میں گھس کر بچی کی آبروریزی کی ۔ ملزم نے اس دوران معصوم کو جان سے مارنے کی دھمکی بھی دی۔


وہیں جب بچی کے اہل خانہ گھر پہنچے تو ان کے ہوش اڑ گئے ۔ انہوں نے فورا بچی کو علاج کیلئے ضلع میڈیکل میں بھرتی کرایا ، جہاں پر بچی نے ڈاکٹروں کو واقعہ کی جانکاری دی ۔ اس کے بعد متاثرہ کے اہل خانہ میں ملزم کے خلاف معاملہ درج کرایا ۔ پولیس نے معاملہ درج کرکے ملزم کی تلاش شروع کی اور معصوم کی آبروریزی کے ملزم کو گرفتار کرلیا ۔ فی الحال متاثرہ لڑکی زیرعلاج ہے ۔

First published: Oct 27, 2019 11:19 PM IST