جھارکھنڈ میں الیکشن سے قبل بڑا نکسلی حملہ، 4 پولیس اہلکارشہید

موصولہ اطلاعات کے مطابق چندوا تھانہ علاقے میں نکسلیوں نے گھات لگاکرپی سی آروین کو نشانہ بنایا۔ یہ حملہ چندوا تھانے سے کچھ ہی دوری پرہوا ہے۔

Nov 23, 2019 12:10 AM IST | Updated on: Nov 23, 2019 12:12 AM IST
جھارکھنڈ میں الیکشن سے قبل بڑا نکسلی حملہ، 4 پولیس اہلکارشہید

جھارکھنڈ میں نکسلی حملہ، 4 پولیس اہلکار شہید

رانچی: جھارکھنڈ کے لاتیہار ضلع میں جمعہ کو ہوئے نکسی حملے میں چارپولیس اہلکاروں نے اپنی جان گنوادی۔ افسران نے بتایا کہ حادثہ رات میں تقریباً ساڑھے بجے چاندوا تھانے علاقہ کا ہے۔ ہتھیاربند ماؤنوازوں نے سرکاری کارمیں سوارپولیس اہلکاروں پرحملہ کردیا۔ انہوں نے بتایا کہ ماؤنوازوں نے پولیس کی ٹیم پرگھات لگاکرحملہ کیا۔ ایک سب انسپکٹر کا درجہ کے افسرسمیت چارپولیس اہلکارشہید ہوگئے۔

موصولہ اطلاعات کے مطابق چندوا تھانہ علاقے میں نکسلیوں نے گھات لگاکرپی سی آروین کو نشانہ بنایا۔ یہ حملہ چندوا تھانے سے کچھ ہی دوری پرہوا ہے۔ اس حملے میں اے ایس آئی سکرا اراؤں، ہوم گارڈ کے جوان سکیندرسنگھ، ہوم گارڈ کے جوان شمبھو پرساد شہید اورپی سی آروین کے ڈرائیوریمنا پرساد شہید ہوگئے۔

Loading...

واضح رہے کہ جھارکھنڈ میں پانچ مرحلے میں اسمبلی انتخابات ہونے جارہے ہیں۔ 30 نومبرکوپہلے مرحلے کا الیکشن ہے۔ اس سے قبل جون میں جھارکھنڈ کے سرائے کیلا - کھرساواں  میں نکسلی حملہ ہوا تھا، جس میں پانچ پولیس اہلکارشہید ہوگئے تھے۔ ککڑ ہفتہ واری ہٹ میں نکسلیوں نے گشتی ٹیم پرحملہ کردیا، جس میں ضلع پولیس ٹیم کے پانچ جوان شہید ہوگئے۔

 

Loading...