உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    نابالغ آبروریزی متاثرہ کا قتل کرکے لاش کو پیڑ سے لٹکایا، انسپکٹر سمیت تین معطل، اکھلیش یادو کا بی جے پی پر حملہ

    نابالغ آبروریزی متاثرہ کا قتل کرکے لاش کو پیڑ سے لٹکایا، انسپکٹر سمیت تین معطل

    نابالغ آبروریزی متاثرہ کا قتل کرکے لاش کو پیڑ سے لٹکایا، انسپکٹر سمیت تین معطل

    اترپردیش کے امروہہ ضلع کے ڈھبارسی علاقے میں ستمبر ماہ میں آبروریزی کا شکار ہوئی نابالغ بچی کی لاش اتوار کو کھیت میں نیم کے پیڑ سے پھندے پرلٹکتی ہوئی ملی۔ مہلوکین کے اہل خانہ نے آبروریزی کے ملزم پر قتل کا الزام لگاتے ہوئے پولیس پر سنگین الزام لگائے۔

    • Share this:
      امروہہ: اترپردیش کے امروہہ (Amroha) ضلع کے ڈھبارسی علاقے میں ستمبر ماہ میں آبروریزی کا شکار ہوئی نابالغ (Rape Victim) کی لاش اتوار کو کھیت میں نیم کے پیڑ سے پھندے پر لٹکتی ہوئی ملی۔ مہلوکین کے اہل خانہ نے آبروریزی کے ملزم پر قتل کا الزام لگاتے ہوئے پولیس پر سنگین الزام لگائے۔ اس کے بعد حرکت میں آئی پولیس نے ملزم مونو شرما، اس کی ماں وملا اور بھائی پر قتل کا مقدمہ درج کیا۔ پولیس نے ملزم کی ماں کو حراست میں لے لیا ہے۔ اس درمیان ایس پی نے معاملے میں لاپرواہی برتنے والے آدم پور تھانے کے انسپکٹر ستیش کمار آریہ، سپاہی راہل کمار اور سمت کمار کو معطل کردیا۔ ایس پی پونم نے معاملے میں پولیس کے کردار کی جانچ اے ایس پی کو سونپی ہے۔

      واضح رہے کہ پورا حادثہ آدم پور تھانہ علاقے کے ایک گاوں کا ہے۔ الزام ہے کہ 25 ستمبر کو گاوں کے ہی ایک نوجوان مونو شرما نے گھر میں گھس کر لڑکی کے ساتھ آبروریزی کی تھی۔ اتوارکی صبح وہ کھیت میں چارہ لینے گئی تھی۔ کافی دیر بعد بھی گھرنہ لوٹنے پر جب گھر کے لوگ تلاش کرنے نکلے تو متاثرہ کی لاش نیم کے پیڑ پر پھندے پر لٹکی ہوئی ملی۔ ہاتھ پیر بھی رسی سے بندھے ہوئے تھے۔ اس کے بعد ماحول گرم ہوتے ہوئے دیکھ کر کئی تھانوں کی پولیس بلائی گئی۔ کافی مشقت کے بعد پولیس لاش کو پوسٹ مارٹم کے لئے بھیج پائی۔

      اہل خانہ نے پولیس پر لگایا یہ الزام

      اہل خانہ کا الزام ہے کہ پولیس نے آبروریزی کے معاملے میں پہلے چھیڑ خانی کی دفعات میں مقدمہ درج کیا تھا، لیکن جب متاثرہ کی مجسٹریٹی بیان درج ہوئے تو اس کا میڈیکل کراکر آبروریزی کی دفعات کو جوڑا گیا۔ اہل خانہ نے یہ بھی الزام لگایا ہے کہ ملزم کی گرفتاری نہ ہونے کی وجہ سے ہی لڑکی کا قتل کیا گیا۔

      اکھلیش یادود نے ٹوئٹ کرکے پیش کیا خراج عقیدت

      دوسری جانب، سماجوادی پارٹی کے قومی صدر اور سابق وزیر اعلیٰ اکھلیش یادو نے حادثہ پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے حکومت پر نشانہ سادھا۔ انہوں نے ٹوئٹ کرتے ہوئے لکھا، ’امروہہ میں آبروریزی کی شکار نابالغ متاثرہ کے قتل کا معاملہ بے حد سنگین، مایوس کن اور شرمناک ہے، خراج عقیدت! اس سے متعلق کچھ بدعنوان پولیس اہلکاروں کو معطل کرکے یوپی کی بی جے پی حکومت بچ نہیں سکتی۔ آبروریزی کا ملزم ستمبر سے فرار ہے۔ دراصل اترپردیش میں حکومت ہی فرار ہے۔ قابل مذمت!‘
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: