رویندرجڈیجہ کےخاندان میں تنازعہ: بہن نےکانگریس کا دامن تھاما، بیوی بی جے پی میں شامل

جڈیجہ کی اہلیہ نینابا نےگزشتہ فروری میں سیاست میں قدم رکھتے ہوئےنوتشکیل آل ویمنس پارٹی جوائن کی تھی۔

Apr 14, 2019 09:45 PM IST | Updated on: Apr 14, 2019 09:45 PM IST
رویندرجڈیجہ کےخاندان میں تنازعہ: بہن نےکانگریس کا دامن تھاما، بیوی بی جے پی میں شامل

جام نگر: ٹیم انڈیا کے اسٹارآل راؤنڈرکرکٹررویندرجڈیجہ کےاہل خانہ میں لگتا ہے سیاسی تنازعہ پیدا ہوگیا ہے۔ ان کی اہلیہ ریوابا کے گزشتہ ماہ برسراقتدار بی جے پی میں شامل ہونے کےبعد آج ان کی سب سے بڑی بہن نینابا نے اہم اپوزیشن پارٹی کانگریس میں شامل ہوگئیں ہیں۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ رویندرجڈیجہ خاندان کےاس آبائی شہرمیں اب بھابھی (ریوابا) اور نند(نینابا) کٹرمخالف پارٹیوں کےلئےانتخابی مہم بھی چلائیں گی۔

رویندرجڈیجہ کی دوبہنوں (دونوں ان سے بڑی) نینابا، جوغیرشادی شدہ ہیں اورپہلے یہاں سرکاری جی جی اسپتال میں بطورنرس کام کرچکی ہیں، نینابا نے یہاں کالاواڈ میں کانگریس کے ایک پروگرام میں آج والد انیرودھ سنگھ جڈیجہ کی موجودگی میں پارٹی میں شامل ہوئیں۔ اس موقع پرپاٹیدارآرکشن آندولن سمیتی کے سابق لیڈراورگزشتہ ماہ ہی کانگریس میں شامل ہوئے ہاردک پٹیل بھی موجود تھے۔

نینابا نےگزشتہ فروری میں سیاست میں قدم رکھتے ہوئےنوتشکیل آل ویمنس پارٹی جوائن کی تھی۔ انہوں نے یواین آئی کوآج بتایا کہ ان کے والد نےحالانکہ خود کانگریس میں شامل نہیں ہوئے ہیں پران کے فیصلہ کو اپنی حمایت دی ہے۔ وہ گجرات کے سبھی 26 سیٹوں پر23 اپریل کوہونے والے لوک سبھا انتخابات میں جام نگرکےکانگریس امیدوارمولوکنڈوریا کی حمایت میں انتخابی مہم چلائیں گے۔ انہوں نے اپنی بھابھی کے بارے میں کوئی بھی رائے زنی کرنےسے انکارکردیا۔

Loading...

Loading...