ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

لال قلعہ پرتشدد کامعاملہ: دہلی کی عدالت نے دیپ سدھو کودی مشروط ضمانت

دہلی کی تیس ہزاری عدالت نے دیپ سدھو کو 30 ہزار روپے کے ذاتی مچلکے پر ضمانت منظور کرلی ہے۔ تاہم ، ضمانت کچھ شرائط کے ساتھ دی گئی ہے۔

  • Share this:
لال قلعہ پرتشدد کامعاملہ: دہلی کی عدالت نے دیپ سدھو  کودی مشروط ضمانت
لال قلعہ تشدد معاملہ میں ملزم دیپ سدھو

نئی دہلی: 26 جنوری کو دہلی کے لال قلعے میں تشدد کے الزام میں دیپ سادھو کو ضمانت مل گئی ہے۔ دہلی کی تیس ہزاری عدالت نے دیپ سدھو کو 30 ہزار روپے کے ذاتی مچلکے پر ضمانت منظور کرلی ہے۔ تاہم ، ضمانت کچھ شرائط کے ساتھ دی گئی ہے۔ ان میں یہ شرط شامل ہے کہ جب پولیس کی جانب سے کال کیے جانے پر حاضر ہونا ، پاسپورٹ پولیس کے پاس جمع کروانا ، فون اور نمبر تبدیل نہ کرنا اور ثبوتوں کے ساتھ چھیڑ چھاڑ نہ کریں۔ ہم آپ کو بتادیں کہ کسانوں کی تحریک کے تحت نکالی جانے والی ٹریکٹر ریلی کے دوران ایک لال قلعہ کے قریب پرتشدد احتجاج ہواتھا جس میں دیپ سدھو کے ملوث ہونے کا الزام ہے۔



یہ بات اہم ہے کہ کسان تنظیمیں زرعی قوانین کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے مرکزی حکومت کے خلاف مستقل احتجاج کر رہی ہیں۔ اس کے تحت ، 26 جنوری کو لال قلعے تک ٹریکٹر ریلی نکالی تھی جس کے دوران دہلی کے کئی مقامات پر پرتشدد مظاہرےکیے گئے تھے۔ واقعے کے بعد ، اہم ملزم دیپ سدھو نے فیس بک لائیو کے ذریعے خود کو بے قصور بتایا تھا۔ دیپ سدھو نے کہا تھا کہ مجھے پتہ چل گیا ہے کہ میرے خلاف گرفتاری کا وارنٹ اورلاک آؤٹ نوٹس جاری کیا گیا ہے۔ میں کچھ دنوں میں تفتیشی ایجنسی کے سامنے حاضر ہوں گا۔

میں تحقیقات سے خوفزدہ نہیں ہوں ۔ دیب سدھو

ڈیپ سدھو نے فیس بک لائیو کے دوران کہا کہ ان کے خلاف بہت بے بنیاد باتیں پھیلائی جارہی ہیں۔ میں کسی تفتیش سے نہیں ڈرتا۔ جب میں نے کوئی غلط کام نہیں کیا ہے تو ، مجھے کسی سے بھاگنے کی ضرورت نہیں ہے۔ سدھو نے کہا ، مجھے کچھ چیزوں کی حقیقت معلوم کرنے کے لئے کچھ وقت درکار ہے۔ میں جلد ہی تمام حقائق کے ساتھ تحقیقاتی ایجنسی کے سامنے حاضر ہوجاؤں گا۔ سدھو نے کہا کہ میں نے کچھ غلط نہیں کیا ہے لہذا میں تحقیقات سے نہیں راہ فرار اختیار نہیں کرونگا۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Apr 17, 2021 01:06 PM IST