உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    فیوچر ریٹیل کے 30 ہزار ملازمین کو نوکری دے گی ریلائنس

    فیوچر ریٹیل کے 30 ہزار ملازمین کو نوکری دے گی ریلائنس

    فیوچر ریٹیل کے 30 ہزار ملازمین کو نوکری دے گی ریلائنس

    فیوچر ریٹیل کے آن لائن اور آف لائن کاروبار سمیٹنے کے بعد اس کے ہزاروں ملازمین کی نوکریوں پر خطرہ منڈلانے لگا ہے۔ حالانکہ ریلائنس رٹیل نے جن اسٹورز کا کنٹرول اپنے ہاتھوں میں لیا ہے ، ان اسٹورز کے تقریبا 30 ہزار ملازمین کی نوکری محفوظ ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی : فیوچر ریٹیل کے آن لائن اور آف لائن کاروبار سمیٹنے کے بعد اس کے  ہزاروں ملازمین کی نوکریوں پر خطرہ منڈلانے لگا ہے۔ حالانکہ ریلائنس رٹیل نے جن اسٹورز کا کنٹرول اپنے ہاتھوں میں لیا ہے ، ان اسٹورز کے تقریبا 30 ہزار ملازمین کی نوکری محفوظ  ہے۔ ریلائنس رٹیل ان اسٹورز کی ری برانڈنگ کے ساتھ ساتھ اسٹورز میں کام کرنے والے ملازمین کو بھی اپنے پے ۔ رول پر رکھ رہا ہے ۔

      فیوچر رٹیل کے ایسے ملازمین کو اپنی نوکری گنوانی پڑ سکتی ہے ، جو ریلائنس کے ذریعہ کنٹرولڈ مسٹورز میں کام نہیں کرتے ہیں۔ اتوار سے فیوچررٹیل کے بیشتر  اسٹورز پر تالا پڑا ہوا ہے ۔ آن لائن کاروبار کی ویب سائٹ بھی ٹھپ ہے۔  ہزاروں  کنبوں کی روزی روٹی پر بے روزگاری کی تلوار لٹک رہی ہے ، ایسے میں ان  اسٹورز کے ملازمین نے راحت کی سانس لی ہے جن کا کام کاج اب ریلائنس ریٹیل  سنبھالے گا۔

      ممبئی کے بگ بازار میں کام کرنے والے منیش چاکے، ریلائنس رٹیل کے  پے۔ رول پر لئے جانے کی خبر سے حوصلہ مند  ہیں۔ منیش کے مطابق ’’ مجھے لگا تھا کہ میری بھی نوکری بس اب جانے ہی والی ہے۔ ملک میں پہلے بھی جب کوئی بھی بڑی کمپنی بند ہوتی تھی تو  ہزاروں لوگ سڑک پر آجاتے تھے۔ ہم بھی ڈرے ہوئے تھے لیکن  تبھی ریلائنس نے میرے ساتھ ساتھ میرے ساتھیوں کی نوکری بھی بچا لی۔‘‘

      وہیں دہرہ دون کے دیپک بھی فیوچر رٹیل کے ان ہزاروں ملازمین میں سے ایک  ہیں ، جن کی نوکری پر خطرہ منڈلا رہا تھا۔ دیپک نےکہا کہ ’’ یہ ایک خواب جیسا ہے ، کچھ دن پہلے تک سر پر بے روزگار ی کی تلوار لٹک رہی تھی۔ مستقبل میں کیا کروں گا ، کچھ سمجھ میں نہیں آرہا تھا ، پھر اچانک ریلائنس ربٹیل نے اسٹورز کا  کام کاج اپنے ہاتھوں میں لے لیا۔ ہمیں یقین دلایا گیا ہے کہ ہماری نوکریاں اب نہیں جائیں گی۔‘‘

      فیوچر ریٹیل کے ملازمین کی نوکریوں کا کیا ہوگا، اس پر کمپنی نے ابھی کوئی واضح بیان نہیں دیا ہے۔ لیکن ریلائنس ریٹیل نے اپنے کنٹرول والے اسٹورز کے تقریبا 30 ہزار ملازمین کو نوکریاں آفر کرکے ان پر منڈلا رہا خطرہ ٹال دیا ہے ۔

      ( DISCLAIMER: Network18 and TV18 – the companies that operate news18urdu.com – are controlled by Independent Media Trust, of which Reliance Industries is the sole beneficiary.)
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: