உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    RIL کووڈ 19 پی پی ای کٹ کے کچرے سے بنائے گی مفید پلاسٹک پروڈکٹس،CSIR-NCL سے ملایا ہاتھ

    RIL کووڈ 19 پی پی ای کٹ کے کچرے سے بنائے گی مفید پلاسٹک پروڈکٹس،CSIR-NCL سے ملایا ہاتھ

    RIL کووڈ 19 پی پی ای کٹ کے کچرے سے بنائے گی مفید پلاسٹک پروڈکٹس،CSIR-NCL سے ملایا ہاتھ

    کورونا وائرس وبا کے پھیلنے کے ساتھ ہی پرسنل پروٹیکٹو اکیوپمنٹ ، فیس ماسک ، گلووز جیسے سنگل یوز پلاسٹک پروڈکٹس کی ڈیمانڈ میں کئی گنا اضافہ درج کیا گیا ۔ ملک میں مئی 2021 کے دوران ہر دن 200 ٹن کووڈ 19 سے وابستہ کچرا نکلا ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی : ریلائنس انڈسٹریز اور پونے کی کچھ کمپنیاں اب کووڈ 19 پی پی ای کٹ کے کچرے سے مفید مالڈیڈ پلاسٹک پروڈکٹس تیاری کریں گی ۔ اس کیلئے آر آئی ایل نے پونے کی سی ایس آئی آر ۔ نیشنل کیمیکل لیباریٹری کے ساتھ ہاتھ ملایا ہے ۔ اس پائلٹ پروجیکٹ کو پورے ملک میں پی پی ای کٹ کے کچرے سے مفید اور محفوظ پروڈکٹس بنانے کیلئے لاگو کیا جاسکتا ہے ۔ اس سے بڑی تعداد میں پی پی ای کٹ کے کچرے کا استعمال ہوجائے گا اور اس کے نمٹارہ کی پریشانی بھی ختم ہوجائے گی ۔

      کورونا وائرس وبا کے پھیلنے کے ساتھ ہی پرسنل پروٹیکٹو اکیوپمنٹ ، فیس ماسک ، گلووز جیسے سنگل یوز پلاسٹک پروڈکٹس کی ڈیمانڈ میں کئی گنا اضافہ درج کیا گیا ۔ ملک میں مئی 2021 کے دوران ہر دن 200 ٹن کووڈ 19 سے وابستہ کچرا نکلا ۔ خطرناک پی پی ای کچرے کا سینٹرل ویسٹ مینجمنٹ فیسیلیٹی میں جلا کر نمٹارہ کیا جارہا ہے ۔ پی پی ای ویسٹ کو جلانے میں کافی بجلی خرچ ہوتی ہے ۔ وہیں اس سے نقصاندہ گرین ہاوس گیس بھی نکلتی ہے ۔



      ریلائنس ، سی ایس آئی آر ۔ این سی ایل اور دیگر کمپنیاں کورونا پلاسٹک ویسٹیج کے موثر ریسائیکل کیلئے بہترین پروسیس ڈیولپ کرنے کی مہم میں مصروف ہیں ۔ اس مہم سے وابستہ سبھی کمپنیوں کا ہدف ہے کہ اس کچرے سے مفید پلاسٹک پروڈکٹس تیار کئے جاسکیں ۔ ساتھ ہی ان محفوظ اور مفید پروڈکٹس کیلئے بازار تیار کرنے کی کارروائی بھی جاری ہے ۔ در اصل پی پی ای پلاسٹک ویسٹ کو جلا کر ختم کرنے سے گلوبل وارمنگ کا خطرہ مزید بڑھا جائے گا ۔ اگر اس کا صحیح استعمال کیا جاسکے تو پہلا اس کے جلانے سے پیدا ہونے والی گرین ہاوس گیسوں کو روکا جاسکے گا اور دوسرا ورجن پلاسٹک کے استعمال کو کم کیا جاسکے گا۔

      DISCLAIMER: Network18 and TV18 – the companies that operate news18urdu.com – are controlled by Independent Media Trust, of which Reliance Industries is the sole beneficiary.
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: