உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Crude Oil پر مودی حکومت کی مشکل: روس سے سستا خام تیل خریدنے کی خواہش پر امریکہ نے کہا، ایسا کیا تو یوکرین حملے کا حامی مانیں گے

    روسی صدر ولادیمیر پوتن اور وزیراعظم نریندر مودی۔ (فائل فوٹو)

    روسی صدر ولادیمیر پوتن اور وزیراعظم نریندر مودی۔ (فائل فوٹو)

    امریکی رکن پارلیمنٹ ایمی بیرا نے کہا تھا کہ اگر ہندوستان سستے داموں روسی تیل خریدنے کا فیصلہ کرتا ہے تو اسے ولادیمیر پوتن کی حمایت تصور کیا جائے گا۔ جبکہ پوری دنیا اس وقت یوکرین کے ساتھ اور روس کے خلاف متحد ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: روس اور یوکرین جنگ کا آج 21 واں دن ہے۔ امریکہ اور یورپی ممالک نے روس پر سخت پابندیاں عائد کر رکھی ہیں۔ یہ یقینی طور پر روس کی معیشت کو متاثر کرے گا۔ اس سے نمٹنے کے لیے روس کئی ممالک کو اپنی کرنسی میں سستا خام تیل فراہم کر رہا ہے۔ اس میں ہندوستان بھی شامل ہے۔ تاہم امریکہ چاہتا ہے کہ ہندوستان کسی بھی قیمت پر روس کی پیشکش قبول نہ کرے۔ وائٹ ہاؤس کا کہنا ہے کہ اگر ہندوستان اب روس سے سستا خام تیل خریدتا ہے تو یہ جمہوریت کے لحاظ سے انتہائی غلط اقدام ہوگا اور یہ سمجھا جائے گا کہ ہندوستان اس معاملے میں روس کا ساتھ دے رہا ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Ukraine Russia War: عالمی عدالت سے یوکرین کو راحت، روس کو فوجی آپریشن روکنے کا حکم

      خام تیل خرید کر روس کی حمایت کرے گا ہندوستان
      روس نے ہندوستان کو سستا تیل دینے کی پیشکش کی ہے۔ اس بارے میں پوچھے جانے پر وائٹ ہاؤس کی پریس سیکرٹری جین ساکی نے کہا کہ یہ پابندیوں کی خلاف ورزی نہیں ہے، لیکن ایسا قدم اٹھانے سے پہلے ہندوستان کو یہ سوچنا چاہیے کہ وہ کس کی حمایت کر رہا ہے؟ جب تاریخ لکھی جائے گی تو روس کی حمایت دراصل یوکرین پر روس کے حملے کی حمایت تصور کی جائے گی۔ اس جنگ کے حوالے سے امریکہ کا پیغام واضح ہے کہ سب کو روس پر عائد پابندیوں پر عمل کرنا ہوگا۔

      یہ بھی پڑھیں:
      ایران کی حکومت کا تختہ پلٹنے کے الزام میں سالوں سے قید نازنین اور ریٹکلف جیل سے رہا

      ہندوستان کا فیصلہ جنگ کو لے کر اُس کا موقف ظاہر کرے گا
      اس سے قبل امریکی رکن پارلیمنٹ ایمی بیرا نے کہا تھا کہ اگر ہندوستان سستے داموں روسی تیل خریدنے کا فیصلہ کرتا ہے تو اسے ولادیمیر پوتن کی حمایت تصور کیا جائے گا۔ جبکہ پوری دنیا اس وقت یوکرین کے ساتھ اور روس کے خلاف متحد ہے۔ بیرا نے کہا کہ دنیا کی سب سے بڑی جمہوریت اور QUAD (ہندوستان، امریکہ، جاپان اور آسٹریلیا کے درمیان اسٹریٹجک تنظیم) کے رہنما کے طور پر، ہندوستان کی ذمہ داری ہے کہ وہ کسی بھی طرح سے حملے کی حمایت نہ کرے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: