ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Kisan Aandolan: سنگھو بارڈر پر احتجاج میں شامل سنت بابا رام سنگھ نے خود کو گولی مار کر خودکشی کرلی

دہلی - ہریانہ بارڈر (سنگھو بارڈر) پر کسانوں کے حق میں آواز اٹھانے کے لئے سامنے آئے سنت بابا رام سنگھ (Sant Baba Ram Singh) نے بدھ کو خودکشی (Suicide) کر لی ہے۔

  • Share this:
Kisan Aandolan: سنگھو بارڈر پر احتجاج میں شامل سنت بابا رام سنگھ نے خود کو گولی مار کر خودکشی کرلی
سنگھو بارڈر پر احتجاج میں شامل سنت بابا رام سنگھ نے خود کو گولی مار کر خودکشی کرلی

نئی دہلی: نئے زرعی قانون کے خلاف چل رہے کسانوں کے آندولن کو لے کر اس وقت ایک بڑی خبر آرہی ہے۔ دہلی - ہریانہ بارڈر (سنگھو بارڈر) پر کسانوں کے حق میں آواز اٹھانے سامنے آئے سنت بابا رام سنگھ (Sant Baba Ram Singh) نے بدھ کو خود کشی (Suicide) کرلی ہے۔ بابا رام سنگھ نے خود کو گولی مار لی، جس سے ان کی موت ہوگئی ہے۔ اطلاعات کے مطابق، بابا رام سنگھ کو زخمی حالت میں ایک پرائیویٹ اسپتال بھی لے جایا گیا، جہاں ڈاکٹروں نے انہیں مردہ قرار دے دیا۔ اطلاعات کے مطابق، سنت بابا رام سنگھ ہریانہ کے کرنال کے رہنے والے تھے۔ ایک ٹوئٹر صارف نے بابا رام سنگھ کے ذریعہ لکھا گیا ایک سوسائڈ نوٹ بھی پوسٹ کردیا ہے۔ دعویٰ کیا جارہا ہے کہ اس خودکشی نوٹ میں انہوں نے کسان آندولن اور کسانوں کے حق کے لئے آواز بلند کرنے کا ذکر کیا ہے۔




دہلی پولیس نے بند کیا بارڈر

دوسری جانب، احتیاط کے طور پر دہفلی ٹریفک پولیس نے ٹکری، دھنسا بارڈر کو کسی بھی طرح کے ٹریفک موومنٹ کے لئے بند کردیا ہے۔ پولیس نے جھٹیکرا بارڈر کو صرف دوپہیہ اور پیدل مسافروں کے لئے کھلا رکھا ہے۔ وہیں خبر ہے کہ آندولن کرنے والے کسانوں نے ایک بار پھر سے نوئیڈا کو دہلی سے جوڑنے والی چلا سرحد کو جام کردیا ہے۔ اس سے نوئیڈا لنک روڈ بند ہوگیا ہے۔ وہیں گاڑیوں کی آمدورفت کو روک دیا گیا ہے۔ بڑی تعداد میں کسان ایک بار پھر سے ٹریکٹر - ٹرالی کے ساتھ چلا بارڈر پر پہنچ گئے ہیں۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Dec 16, 2020 09:04 PM IST