உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ’سر تن سے جدا،تیرے56ٹکڑے ہوں گے‘، الور میں خاتون بی جے پی لیڈر کو ملی دھمکی

    ’سر تن سے جدا،تیرے56ٹکڑے ہوں گے‘، الور میں خاتون بی جےپی لیڈر کو ملی دھمکی

    ’سر تن سے جدا،تیرے56ٹکڑے ہوں گے‘، الور میں خاتون بی جےپی لیڈر کو ملی دھمکی

    چارول اگروال کا گیانواپی سے سیدھا تعلق نہیں ہے۔ حالانکہ، انہوں نے کچھ دن پہلے گیان واپی کو لے کر فیس بک پر ایک میسیج کیا تھا۔ اس میسیج کے بعد اب 19 ستمبر یعنی آج چارول اگروال کو جان سے مارنے کی دھمکی ملی ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Alwar | Jaipur
    • Share this:
      حال ہی میں عدالت سے گیان واپی مسجد کو لے کر آئے فیصلے کے بعد الور کی بی جےپی لیڈر چارول اگروال کو ایک دھمکی بھری چٹھی ملی ہے۔ چٹھی میں غیر مہذب الفاظ کا استعمال کرنے کے ساتھ ہی لکھا گیا ہے، 56 انچ کا سینہ کہاں گیا، 25 ستمبر سے پہلے پہلے تمہارا حال اُدئے پور والے لڑکے کے جیسا کردیں گے۔ تمہارے 56 ٹکڑے کردیں گے۔

      بتادیں کہ اس چٹھی میں اور بھی کافی کچھ لکھا ہوا ہے۔ یہ چٹھی جب چارول اگروال تک پہنچی تو افراد خاندان سہم گیا۔ یہ چتھی لے کر چارول اور ان کے افراد خاندان الور پولیس کے پہنچے۔ پولیس سبھی پہلووں کی جانچ کررہی ہے۔

      ’گیان واپی ہمارا ہے، ہم اسے لے کر رہیں گے‘
      معاملے کی جانچ کررہی الور کی صدر تھانہ پولیس نے بتایا، چارول شالیمار ایکسٹینشن یوجنا میں رہتی ہیں۔ وہ اپنے گھر پر تھیں، شوہر بچے کو اسکول چھوڑنے گئے ہوئے تھے۔ جب واپس آئے تو باہر ایک چٹھی پڑی تھی، اس میں لکھا تھا کہ گیان واپی ہمارا ہے، ہم اسے لے کر رہیں گے۔

      لفافہ کھولنے کے بعد جب چٹھی باہر نکالی گئی تو اس میں اُدئے پور کے واقعے کا ذکر تھا اور چارول کے لئے لکھا ہوا تھا کہ 25 ستمبر تک تمہاری جان لے لی جائے گی۔ 56 انچ کا سینہ کسی کام نہیں آئے گا۔

      یہ بھی پڑھیں:
      لکھنؤ میں دلت لڑکی کے ساتھ اجتماعی عصمت دری کے بعد آگ لگا دی گئی، لڑکی جھلس کر مر گئی!

      یہ بھی پڑھیں:
      ممتا بنرجی نے BJP لیڈروں پر لگایا CBI-ED کے غلط استعمال کا الزام، کہا: 'مودی کا ہاتھ نہیں'

      دراصل، چارول اگروال کا گیانواپی سے سیدھا تعلق نہیں ہے۔ حالانکہ، انہوں نے کچھ دن پہلے گیان واپی کو لے کر فیس بک پر ایک میسیج کیا تھا۔ اس میسیج کے بعد اب 19 ستمبر یعنی آج چارول اگروال کو جان سے مارنے کی دھمکی ملی ہے۔ چارول کے شوہر جتیندر اگروال اور چارول دونوں نے پولیس سے سیکورٹی کی مانگ کی ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: