உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    SBI بند کر دے گا ہزاروں بینک اکاونٹ، 31 مارچ تک ضرور نمٹا لیں KYC سے جڑا یہ ضروری کام

    Aadhaar کو PAN سے جلد کرالیں لنک ورنہ بینک اکاونٹ ہوجائے گا بند۔

    Aadhaar کو PAN سے جلد کرالیں لنک ورنہ بینک اکاونٹ ہوجائے گا بند۔

    اسٹیٹ بینک نے الگ الگ ذرائع سے کے وائی سی اپ ڈیٹ کرانے کی جانکاری دی ہے۔ اپنے آفیشل اکاونٹ سے ٹوئٹ کے علاوہ گاہکوں کو میسیج بھیجے گئے۔ ایس بی آئی کے مطابق ہزاروں اکاونٹ ایسے ہیں جن کا کے وائی سی اپ ڈیٹ ہونا ضروری ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی:اگر آپ اسٹیٹ بینک آف انڈیا (SBI) کے گاہک ہیں، تو یہ آپ کے لئے ضروری خبر ہے۔ اسٹیٹ بینک اپنے ہزاروں بینک کھاتے بند کردے گا اگر ان کا کے وائی سی (KYC) نہیں ہوگا۔ اسٹیٹ بینک نے اس کے لئے 31 مارچ 2022 تک کی مہلت دی ہے۔ اگر آپ نے اپنے ایس بی اائی اکاونٹ میں کے وائی سی نہیں کرایا ہے تو 31 مارچ تک اسے چلا سکتے ہیں لیکن 31 مارچ کے بعد آپ کا بینک اکاونٹ بند ہوسکتا ہے۔ اس سے بچنے کا یہی طریقہ ہے کہ 31 مارچ کی ڈیڈ لائن (KYC Lst Date) تک کے وائی سی ضرور کرالیں۔ اگر آپ کو بھی کے وائی سی اپ ڈیٹ کا میسیج آرہا ہے تو اسے ہلکے میں نا لیں اور فوری یہ کام مکمل کرلیں۔

      اسٹیٹ بینک نے کہاہے کہ کے وائی سی اپ ڈیٹ کے ساتھ آدھار کارڈ اور پین بھی لنک ہونا چاہیے۔ اگر آپ نے ان دونوں کاغذاتوں کو لنک نہیں کیا ہے تو گھر بیٹھے آدھار اور پین کو ایک میسیج کے ذریعے لنک کرسکتے ہیں۔ اسٹیٹ بینک آف انڈیا ایک سرکاری بینک ہے اور ملک کا سب سے بڑا بینک بھی۔ اس کے گاہکوں کی تعداد کروڑوں میں ہے۔ کے وائی سی اپ ڈیٹ نہیں ہونے کی وجہ سے اس کے ہزاروں بینک اکاونٹس بند ہوسکتے ہیں جس کے بارے میں ایس بی آئی نے پہلے ہی آگاہ کردیا ہے۔

      SBI نے گاہکوں سے کیا کہا؟
      اسٹیٹ بینک نے الگ الگ ذرائع سے کے وائی سی اپ ڈیٹ کرانے کی جانکاری دی ہے۔ اپنے آفیشل اکاونٹ سے ٹوئٹ کے علاوہ گاہکوں کو میسیج بھیجے گئے۔ ایس بی آئی کے مطابق ہزاروں اکاونٹ ایسے ہیں جن کا کے وائی سی اپ ڈیٹ ہونا ضروری ہے۔ اس کی آخری تاریخ 31 مارچ مقرر کی گئی ہے۔ اس ڈیڈلائن تک اکاونٹ کا کے وائی سی ضرور اپ ڈیٹ کرلیں ورنہ بعد میں اکاونٹ سے ٹرانزیکشن نہیں ہوگا۔ اے ٹی ایم یا ڈیبٹ کارڈ بھی کام نہیں کرے گا۔

      آپ مندرجہ ذیل طریقہ کار سے اپنے PAN کو آدھار کے ساتھ لنک کر سکتے ہیں۔

      a) انکم ٹیکس ای فائلنگ پورٹل کھولیں - https://incometaxindiaefiling.gov.in/

      b) اس پر رجسٹر کریں (اگر پہلے سے نہیں کیا گیا ہے)۔ آپ کا PAN (مستقل اکاؤنٹ نمبر) آپ کا یوزر ID ہوگا۔

      c) یوزر آئی ڈی، پاس ورڈ اور تاریخ پیدائش درج کرکے لاگ ان کریں۔

      d) ایک پاپ اپ ونڈو نمودار ہوگی، جو آپ سے اپنے PAN کو آدھار کے ساتھ لنک کرنے کو کہے گی۔ اگر نہیں، تو مینو بار پر 'پروفائل سیٹنگز' پر جائیں اور 'لنک آدھار' پر کلک کریں۔

      e) پین(PAN) تفصیلات کے مطابق نام، تاریخ پیدائش اور جنس جیسی تفصیلات کا پہلے سے ذکر کیا جائے گا۔

      f) اسکرین پر اپنے آدھار پر مبنی PAN تفصیلات کی تصدیق کریں۔ براہ کرم نوٹ کریں کہ اگر کوئی مماثلت نہیں ہے، تو آپ کو کسی بھی دستاویزات میں اسے درست کرنے کی ضرورت ہوگی۔

      g) اگر تفصیلات مماثل ہیں، تو اپنا آدھار نمبر درج کریں اور "Now Link" بٹن پر کلک کریں۔

      h) ایک پاپ اپ میسج آپ کو مطلع کرے گا کہ آپ کا آدھار آپ کے PAN سے کامیابی کے ساتھ منسلک ہو گیا ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: