ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بریکنگ نیوز: کانگریس کے سینئر لیڈر موتی لال ووہرا کا انتقال، 93 سال کی عمر میں دنیا کو کہا الوداع، راہل گاندھی نے پیش کیا خراج عقیدت

کانگریس کے سینئر لیڈر موتی لال ووہرا (Motilal Vora) کا انتقال ہوگیا ہے۔ موتی لال ووہرا نے 93 سال کی عمر میں دہلی کے فورٹیس اسکارٹ اسپتال میں آخری سانس لی۔ یہ کانگریس کے لئے بہت بڑا خسارہ ہے۔

  • Share this:
بریکنگ نیوز: کانگریس کے سینئر لیڈر موتی لال ووہرا کا انتقال، 93 سال کی عمر میں دنیا کو کہا الوداع، راہل گاندھی نے پیش کیا خراج عقیدت
کانگریس کے سینئر لیڈر موتی لال ووہرا کا انتقال، راہل گاندھی نے پیش کی خراج عقیدت

نئی دہلی: کانگریس کے سینئر لیڈر موتی لال ووہرا (Motilal Vora) کا انتقال ہوگیا ہے۔ موتی لال ووہرا نے 93 سال کی عمر میں دہلی کے فورٹیس اسکارٹ اسپتال میں آخری سانس لی۔ یہ کانگریس کے لئے بہت بڑا خسارہ ہے۔ وہ کانگریس کے عظیم لیڈروں میں سے ایک تھے۔ ان کے انتقال پر کانگریس کے سابق صدر اور رکن پارلیمنٹ راہل گاندھی نے خراج عقیدت پیش کیا ہے۔

موتی لال ووہرا پرانے عظیم سیاستداں میں شمار کئے جاتے رہے اور 50 سالوں سے کانگریس کے ساتھ تنظیم اور حکومت سے منسلک رہے۔ مدھیہ پردیش کے وزیر اعلیٰ رہ چکے موتی لال ووہرا کا سیاسی سفر 1960 کی دہائی میں شروع ہوا تھا اور آغاز میں سماجوادی نظریات والی پارٹی کے ساتھ جڑے تھے، لیکن اس کے بعد 1970 میں کانگریس میں آئے اور کانگریس پارٹی اور ریاستی حکومت میں اعلیٰ عہدوں پر رہنے کے بعد راجیہ سبھا تک پہنچے۔ موتی لال ووہرا تنازعات میں گھرے، لیکن کچھ وجوہات سے گاندھی فیملی کے انتہائی خاص مانے جاتے رہے۔

 




پربھات تیواری اور پنڈت کشوری لال شکلا کی مدد سے 1970 میں کانگریس میں شامل ہوئے تھے۔ اس کے ایک دہائی کے اندر ہی وہ گاندھی فیملی کے قریب آگئے تھے۔ ان کی صلاحیت اور ایک دہائی میں مدھیہ پردیش میں تین بار الیکشن جیتنا خاص وجہ تھی۔ 1983 میں اندرا گاندھی حکومت میں موتی لال ووہرا کو کابینہ وزیر بنایا تھا۔ اندرا گاندھی کے قتل کے بعد 1985 میں موتی لال ووہرا نے مدھیہ پردیش کے وزیراعلیٰ کا عہدہ سنبھالا۔ اس کے بعد راجیو گاندھی حکومت میں بھی موتی لال ووہرا شامل ہوئے، جب راجیہ سبھا کے رکن کے طور پر انہیں کابینہ وزیر بنایا گیا تھا۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Dec 21, 2020 04:17 PM IST