ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اشتعال انگیز بیان دے کر برا پھنسا شرجیل امام ، آبائی گھر پر پولیس کا چھاپہ ، دہلی میں بھی کیس درج

شرجیل امام کا ایک ویڈیو کافی وائرل ہورہا ہے ، جس میں وہ کہتا نظر آرہا ہے کہ ہمارے پاس منظم لوگ ہوں تو ہم ہندوستان سے آسام کو ہمیشہ کیلئے الگ کرسکتے ہیں ۔

  • Share this:
اشتعال انگیز بیان دے کر برا پھنسا شرجیل امام ، آبائی گھر پر پولیس کا چھاپہ ، دہلی میں بھی کیس درج
شرجیل امام کا ایک ویڈیو کافی وائرل ہورہا ہے ، جس میں وہ کہتا نظر آرہا ہے کہ ہمارے پاس منظم لوگ ہوں تو ہم ہندوستان سے آسام کو ہمیشہ کیلئے الگ کرسکتے ہیں ۔

شہریت ترمیمی قانون کے خلاف دہلی کے شاہین باغ میں جاری احتجاج کا خود کو آرگنائزر بتانے والا شرجیل امام قابل اعتراض بیان دے کر برا پھنس گیا ہے ۔ شرجیل کے آبائی گاوں میں اس کے گھر پر چھاپہ ماری کی گئی ہے ۔ بتایا جارہا ہے کہ مرکزی ایجنسیوں نے یہ چھاپہ ماری مقامی جہان آباد پولیس کی مدد سے کی ہے اور تین لوگوں کو حراست میں لے کر پوچھ گچھ بھی کی گئی ۔ حالانکہ بعد میں انہیں رہا کردیا گیا ۔


جہان آباد کے ایس پی منیش کمار نے پولیس کارروائی کی تصدیق کی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ مرکزی ایجنسیوں نے تعاون کرنے کیلئے کہا تھا اور اسی سلسلہ میں جہان آباد پولیس کے تعاون سے کاکے میں واقع اس کے آبائی گھر پر چھاپہ ماری کی گئی ۔ مرکزی ایجنسیاں اپنا کام کررہی ہیں ۔ تاہم اس معاملہ میں منیش کمار زیادہ تفصیلات فراہم کرنے سے بچتے نظر آئے ۔


دہلی پولیس نے درج کی ایف آئی آر


ادھر شرجیل امام کے خلاف دہلی پولیس نے اشتعال انگیز بیان دینے اور دیگر دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کر لی ہے ۔ اس سے پہلے اترپردیش کے علی گڑھ اور آسام میں بھی اس کے خلاف غداری کا کیس درج کیا گیا تھا ۔ گرفتاری کیلئے علی گڑھ پولیس نے دو رکنی ٹیم کو بھی بھیجی ہے ۔


خیال رہے کہ جے این یو طالب علم شرجیل امام کا ایک ویڈیو کافی وائرل ہورہا ہے ، جس میں وہ کہتا نظر آرہا ہے کہ ہمارے پاس منظم لوگ ہوں تو ہم ہندوستان سے آسام کو ہمیشہ کیلئے الگ کرسکتے ہیں ۔ یہی نہیں اس نے اس کے علاوہ بھی کئی قابل اعتراض اور اشتعال انگیز باتیں کہی تھیں ۔


 

First published: Jan 26, 2020 02:11 PM IST