شینا قتل کیس میں آج اندرانی کے شوہر پیٹر سے ہوگی پوچھ گچھ

ممبئی۔ شینا بورا کو کس نے مارا، یہ تو ممبئی پولیس نے بتا دیا، لیکن اسے کیوں مارا گیا، اس کا انکشاف ابھی تک نہیں ہوا ہے۔

Aug 27, 2015 09:46 AM IST | Updated on: Aug 27, 2015 09:46 AM IST
شینا قتل کیس میں آج اندرانی کے شوہر پیٹر سے ہوگی پوچھ گچھ

ممبئی۔  شینا بورا کو کس نے مارا، یہ تو ممبئی پولیس نے بتا دیا، لیکن اسے کیوں مارا گیا، اس کا انکشاف ابھی تک نہیں ہوا ہے۔ فی الحال اس معاملے میں پولیس کی جانچ جاری ہے۔ پولیس شینا کے قتل کے الزام میں گرفتار اس کی ماں اندرانی اور اس کے ڈرائیور سے پوچھ گچھ کر رہی ہے۔ وہیں، کولکتہ میں بھی پولیس نے اندرانی کے دوسرے نمبر کے شوہر سنجیو کھنہ کو گرفتار کیا ہے۔ سنجیو کھنہ 24 پرگنہ میں ایک ریزورٹ چلاتے ہیں۔ ممبئی پولیس نے کھنہ پر بھی قتل کے الزام میں کیس درج کیا ہے۔

ممبئی پولیس آج اس معاملے میں سنجیو کھنہ کے علاوہ اندرانی کے موجودہ شوہر اور بڑے میڈیا کاروباری رہے پیٹر مکھرجی سے پوچھ گچھ کر سکتی ہے۔ اس سے پہلے دیر رات پولیس نے پیٹر کے بیٹے راہل سے بھی پوچھ گچھ کی۔

Loading...

پولیس نے یہ کہہ کر اس قتل کی گتھی سلجھانے کا دعوی تو کر دیا کہ شینا کا قتل اس کی ماں اندرانی نے اپنے دوسرے شوہر سنجیو کھنہ اور ڈرائیور شیام رائے کے ساتھ مل کر کیا تھا۔ تینوں پولیس کی گرفت میں ہیں اور ان سے پوچھ گچھ جاری ہے۔ لیکن پولیس ابھی تک یہ پتہ نہیں لگا پائی ہے کہ اس قتل کا مقصد کیا تھا۔ آخر کیوں ایک ماں نے اپنی بیٹی کو مار ڈالا۔ آخر کس وجہ سے اندرانی قاتل بن گئی۔

شینا 20 جون 2011 کو ایچ آرڈپارٹمنٹ میں بطور اسسٹنٹ منیجر شامل ہوئی تھی۔ کمپنی کے مطابق شینا 24 اپریل 2012 کو چھٹی پر چلی گئی تھی اور اسی دن شینا کا قتل ہوا تھا۔ جبکہ ممبئی میٹرو کو شینا کا استعفی اس قتل کے 8 دن بعد یعنی 3 مئی 2012 کو ملا۔ تب 22 سال کی شینا کی طرف سے بھیجے گئے خط میں استعفی کا سبب ذاتی مسئلہ اور کمپنی میں اس کی ایک سال سے بھی کم وقت تک رہنے کے لئے سينيرس کا شکریہ کہا گیا تھا۔ ایسے میں سوال یہ بھی اٹھ رہے ہیں کہ آخر شینا کی موت کے بعد اس کے نام سے کمپنی میں کس نے استعفی بھیجا۔

 

Loading...