உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ’ٹھاکرے کو تھپڑ مارتا‘ والے بیان پر بھڑکی شیوسینا، نارائن رانے کے گھر کیا پتھراو، لگائے مرغی چور کے پوسٹر

    Narayan Rane Vs Uddhav Thackeray:  شیو سینا حامیوں کا مرکزی وزیر نارائن رانے کے گھر کے باہر احتجاج جاری ہے۔ منگل کو پارٹی کے کئی کارکنان نارائن رانے کی رہائش گاہ کے سامنے جھنڈا لہراتے ہوئے گاڑیوں سے نکلے۔ اس دوران مرکزی وزیر کی وارننگ بھی دی گئی ہے۔ کارکنان نے انہیں بغیر سیکورٹی کے باہر نکلنے کا چیلنج دیا ہے۔

    Narayan Rane Vs Uddhav Thackeray: شیو سینا حامیوں کا مرکزی وزیر نارائن رانے کے گھر کے باہر احتجاج جاری ہے۔ منگل کو پارٹی کے کئی کارکنان نارائن رانے کی رہائش گاہ کے سامنے جھنڈا لہراتے ہوئے گاڑیوں سے نکلے۔ اس دوران مرکزی وزیر کی وارننگ بھی دی گئی ہے۔ کارکنان نے انہیں بغیر سیکورٹی کے باہر نکلنے کا چیلنج دیا ہے۔

    Narayan Rane Vs Uddhav Thackeray: شیو سینا حامیوں کا مرکزی وزیر نارائن رانے کے گھر کے باہر احتجاج جاری ہے۔ منگل کو پارٹی کے کئی کارکنان نارائن رانے کی رہائش گاہ کے سامنے جھنڈا لہراتے ہوئے گاڑیوں سے نکلے۔ اس دوران مرکزی وزیر کی وارننگ بھی دی گئی ہے۔ کارکنان نے انہیں بغیر سیکورٹی کے باہر نکلنے کا چیلنج دیا ہے۔

    • Share this:
      ممبئی: مہاراشٹر کے وزیر اعلیٰ ادھو ٹھاکرے کو ’تھپڑ مارنے‘ کی بات کہنے والے مرکزی وزیر نارائن رانے کے خلاف مہاراشٹر میں مخالفت تیز ہوگئی ہے۔ برسراقتدار اتحاد مہاوکاس اگھاڑی میں شامل شیو سینا نے نارائن رانے کے گھر پر پتھراو کردیا۔ کشیدگی کے بعد بی جے پی اور شیو سینا آمنے سامنے آگئی ہیں۔ خبر ہے کہ اورنگ آباد میں مرکزی وزیر کی مخالفت میں شیو سینا کے اراکین نے چپل مارو آندولن کیا۔ حالانکہ، نارائن رانے نے کہا ہے کہ انہوں نے کوئی بھی جرم نہیں کیا۔ ان کے خلاف ناسک، پنے اور مہاڑ میں تین ایف آئی آر درج ہوئی ہیں۔

      شیو سینا حامیوں کا نارائن رانے کے گھر کے باہر احتجاج جاری ہے۔ منگل کو پارٹی کے کئی کارکنان نارائن رانے کی رہائش گاہ کے سامنے جھنڈا لہراتے ہوئے گاڑیوں سے نکلے۔ اس دوران مرکزی وزیر کی وارننگ بھی دی گئی ہے۔ کارکنان نے انہیں بغیر سیکورٹی کے باہر نکلنے کا چیلنج دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ نارائن رانے نے جو ہمارے وزیر اعلیٰ کو لے کر غلط الفاظ کا استعمال کیا ہے، ہم اس کی مخالفت کرتے ہیں اور اسے چیلنج دیتے ہیں کہ وہ بغیر سیکورٹی کے یہاں گھوم کر دکھائیں۔

      صحافیوں سے بات چیت کے دوران نارائن رانے نے کہا، ’میں نے کوئی جرم نہیں کیا ہے۔ میری گرفتاری کی آرہی خبریں جھوٹی ہیں۔ مجھے کسی قانونی کارروائی یا گرفتاری کا نوٹس نہیں ملا ہے‘۔ انہوں نے کہا، ’پولیس کو پہلے میرے بیان کی جانچ کرنی چاہئے کہ کیا یہ کوئی جرم کی طرف جاتا ہے۔ انہیں یہ سمجھنا چاہئے کہ مرکز میں ہماری حکومت ہے‘۔ اس دوران انہوں نے بھی وزیراعلیٰ ادھوٹھاکرے کو لے کر سوال اٹھایا۔ انہوں نے کہا، ’وزیر اعلیٰ ٹھاکرے نے بھی بی جے پی لیڈر پرساد لال کے لئے کچھ ہفتوں پہلے ایسا ہی بیان دیا تھا۔ اس کے خلاف کارروائی کیوں نہیں کی گئی‘؟

      شیو سینا نے لگائے پوسٹر



      وہیں ریاستی بی جے پی نارائن رانے کی حمایت میں آئی ہے اور کارروائی کو سیاسی بدلہ بتایا ہے۔ مہاراشٹر بی جے پی سربراہ چندرکانت پاٹل نے کہا، ’ادھو ٹھاکرے نے بھی لوک سبھا الیکشن 2019 کے دوران وزیر اعظم نریندر مودی کے خلاف ایسی ہے الفاظ کا استعمال کیا تھا۔ دشہرہ ریلی کے دوران بھی ان کی زبان قابل اعتراض تھی‘۔ انہوں نے کہا، ’آئینی التزام کے مطابق کوئی بھی حکومت یا اتھارٹی مرکزی وزیر کو گرفتار نہیں کرسکتی ہے‘۔

      شیو سینا نے نارائن رانے کو مرکزی وزیر کے عہدے سے برخاست کرنے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔ پارٹی لیڈر ونائک راوت نے کہا، ’میں آج وزیر اعظم مودی سے مل کر اور میری یارٹی کے نام پر انہیں ایک خط دوں گا‘۔

      گرفتاری کرنے ٹیم نکلی

      خبر ہے کہ ناسک پولیس کی ایک ٹیم کونکان علاقے میں چپلون کے لئے نکل گئی ہے۔ یہیں پر نارائن رانے موجود ہیں۔ ہندوستان ٹائمس کی رپورٹ کے مطابق، ناسک پولیس کمشنر دیپک پانڈ ے ڈپٹی کمشنر سنجے برکنڈ کو رانے کو گرفتار کرنے اور انہیں عدالت میں پیش کرنے کے لئے ایک ٹیم بنانے کو کہا تھا۔ ہدایت نامہ میں پانڈے نے کہا، ’معاملہ کی سنجیدگی کو دیکھتے ہوئے، میں نے ڈی سی پی سطح کے افسران سنجے برکنڈ کو ایک ٹیم تشکیل کرنے اور گرفتار کرنے کے بعد نارائن رانے کو عدالت کے سامنے پیش کرنے کے لئے کہا ہے‘۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: