بی جے پی - شیو سینا تنازعہ ختم ہونےکا اشارہ، سنجے راؤت نےکہا- ذاتی فائدہ اہمیت نہیں رکھتا، ریاست ضروری'۔

سنجے راؤت نےاپنےنئے بیان میں کہا ہے کہ ذاتی فائدہ اہمیت نہیں رکھتا، ریاست ضروری ہے، جس سے یہ مانا جارہا ہے کہ بی جے پی اورشیو سینا کواقتدارمیں آنےکا فارمولہ مل چکا ہے۔

Oct 30, 2019 08:11 PM IST | Updated on: Oct 30, 2019 08:12 PM IST
بی جے پی - شیو سینا تنازعہ ختم ہونےکا اشارہ، سنجے راؤت نےکہا- ذاتی فائدہ اہمیت نہیں رکھتا، ریاست ضروری'۔

مہاراشٹرکے وزیراعلیٰ دیویندر فڑنویس ممبئی میں شیو سینا سربراہ ادھو ٹھاکرے کے ساتھ۔۔ تصویر: پی ٹی آئی

ممبئی: مہاراشٹرمیں حکومت بنانے کولےکربی جے پی اورشیوسینا کے درمیان چل رہی رسہ کشی ختم ہوتی نظرآرہی ہے۔ شیوسینا کے لیڈرسنجے راؤت کی طرف سےآئے بیان میں ایسا پیغام ملتا نظرآرہا ہے۔ ساتھ ہی انہوں نے یہ بھی کہا ہےکہ بی جے پی کے ساتھ شیوسینا کا اتحاد ٹوٹا نہیں ہے۔

سنجے راؤت نےاپنےنئے بیان میں کہا ہے کہ ذاتی فائدہ اہمیت نہیں رکھتا، ریاست ضروری ہے، جس سے یہ مانا جارہا ہے کہ بی جے پی اورشیو سینا کواقتدارمیں آنےکا فارمولہ مل چکا ہے۔ شیوسینا لیڈرسنجے راؤت نےکہا ہے کہ حکومت بنانے کا دعویٰ کرنے والے فریق کو ایوان میں 145 سیٹوں کی ضرورت ہوگی... صرف اتنا ہی اہمیت رکھتا ہے۔ ساتھ ہی انہوں نے کہا ہےکہ بی جے پی کےساتھ ان کا اتحاد چل رہا ہے۔ وہیں سنجے راؤت نے وزیراعلیٰ عہدے کولےکرکہا ہے'ذاتی فائدہ اہمیت نہیں رکھتا، ریاست زیادہ اہم ہے'۔

Loading...

واضح رہے کہ مہاراشٹرمیں شیوسینا کے نومنتخب اراکین اسمبلی نےقانون سازپارٹی کا لیڈر منتخب کرنےکے لئے میٹنگ کی۔ شیوسینا کےایک لیڈرنےبدھ کوبتایا تھا کہ اس  سے متعلق ایک میٹنگ وسط ممبئی واقع شیوسینا بھون میں منعقد ہوگی۔ ادھو ٹھاکرے کی قیادت والی شیو سینا اوراتحادی بی جے پی میں اگلی حکومت میں اقتدارکولےکر 24 اکتوبرسے ہی رسہ کشی چل رہی ہے، جب الیکشن کےنتائج کا اعلان کیا گیا تھا۔ شیوسینا، بی جے پی کے ساتھ 50-50 کےفارمولےکی بات کررہی ہے۔ سینئرلیڈراوروزیرایکناتھ شندے سبکدوش ہونے والی اسمبلی کےلیڈرہیں۔

شیو سینا کو62 اراکین اسمبلی کی حمایت

شیوسینا نے اسمبلی الیکشن میں 56 سیٹیں جیتی ہیں اورابھی تک گاوت اورپاٹل سمیت 6 اراکین اسمبلی کی حمایت حاصل کرچکی ہے۔ اس سے 288 اراکین والی اسمبلی میں اس کی تعداد بڑھ کر62 ہوگئی ہے۔ وہیں دوسری طرف اسمبلی الیکشن میں 105 سیٹیں جیتنے والی بی جے پی کوکم ازکم 6 اراکین اسمبلی کی حمایت حاصل ہوئی ہے، جس میں سے بیشترپارٹی کے باغی ہیں، جنہوں نےآزاد امیدوارکے طورپرالیکشن لڑا تھا۔ بی جے پی اورشیوسینا کے درمیان باری باری سے وزیراعلیٰ کے موضوع پرلفظی جنگ جاری ہے۔ شیوسینا کا کہنا ہے کہ جب تک بی جے پی 50-50 کے فارمولہ کے لئے تحریری یقین دہانی نہیں کراتی ہے جب تک شیو سینا اپنے فیصلے پرقائم رہے گی۔ بہرحال شیو سینا لیڈرکے بیان کے بعد اب یہ معاملہ حل ہوتا ہوا نظرآرہا ہے۔

Loading...
Listen to the latest songs, only on JioSaavn.com