உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    شیو سینا رکن پارلیمنٹ سنجے راوت کا راہل گاندھی پر نشانہ، بولے- اگر اصلی ہندتوا وادی ہوتا تو جناح کو گولی مارتا

    شیو سینا رکن پارلیمنٹ سنجے راوت نے کہا ہے کہ اگر کوئی اصلی ہندتوا وادی ہوتا تو وہ مہاتما گاندھی کو نہیں محمد علی جناح کو گولی مارتا۔ (فائل فوٹو)

    شیو سینا رکن پارلیمنٹ سنجے راوت نے کہا ہے کہ اگر کوئی اصلی ہندتوا وادی ہوتا تو وہ مہاتما گاندھی کو نہیں محمد علی جناح کو گولی مارتا۔ (فائل فوٹو)

    Sanjay Raut Vs Rahul Gandhi: راہل گاندھی نے مہاتما گاندھی کو یاد کرتے ہوئے ٹوئٹر پر لکھا، ’ایک ہندتوا وادی نے گاندھی جی کو گولی ماری تھی۔ سب ہندتوا وادی کو لگتا ہے کہ گاندھی جی نہیں رہے۔ جہاں سچ ہے، وہاں آج بھی باپو زندہ ہیں!

    • Share this:
      نئی دہلی: شیو سینا کے رکن پارلیمنٹ سنجے راوت (Sanjay Raut) نے کانگریس پارٹی کے سابق صدر راہل گاندھی (Rahul Gandhi) پر تنقید کی ہے۔ سنجے راوت نے کہا ہے کہ اگر کوئی اصلی ہندتوا ہوتا تو وہ مہاتما گاندھی کو نہیں بلکہ محمد علی جناح کو گولی مارتا۔ دراصل راہل گاندھی نے ٹوئٹر پر لکھا تھا کہ ایک ہندتوا وادی نے گاندھی جی کو گولی ماری تھی۔ واضح رہے کہ آج مہاتما گاندھی کی 74ویں جینتی ہے۔ آج ہی کے دن یعنی 30 جنوری 1948 کو ناتھو رام گوڈسے نے مہاتما گاندھی کو گولی مار کر قتل کردیا تھا۔

      نیوز ایجنسی اے این آئی سے بات چیت کرتے ہوئے سنجے راوت نے راہل گاندھی کے بیان پر رضامندی نہیں ظاہر کی۔ انہوں نے کہا، ’اگر کوئی اصلی ہندتوا وادی ہوتا توہ وہ محمد علی جناح کو گولی مارتا۔ گاندھی کو گولی کیوں مارتا۔ جناح نے پاکستان کا مطالبہ کیا تھا، اگر ہمت تھی آپ میں اور آپ مرد تھے تو پاکستان کا مطالبہ کرنے والوں کو گولی مارتا۔ وہ حب الوطنی کا کام ہوتا۔



      راہل گاندھی نے کیا کہا تھا؟

      واضح رہے کہ اتوار کی صبح راہل گاندھی نے مہاتما گاندھی کو یاد کرتے ہوئے ٹوئٹر پر لکھا، ’ایک ہندتوا وادی نے گاندھی جی کو گولی ماری تھی۔ سب ہندتوا وادیوں کو لگتا ہے کہ گاندھی جی نہیں رہے۔ جہاں سچ ہے، وہاں آج بھی باپو زندہ ہیں!۔

      کانگریس لیڈر راہل گاندھی کا ٹوئٹ
      کانگریس لیڈر راہل گاندھی کا ٹوئٹ


      ہندتوا وادی پر سیاست!

      واضح رہے کہ حال کے دنوں میں راہل گاندھی نے کئی بار ہندتوا وادی کا موضوع اٹھایا ہے۔ گزشتہ سال دسمبر میں راجستھان میں ایک ریلی کے دوران انہوں نے کہا تھا کہ وہ لوگوں کو ہندو اور ہندتوا کے درمیان فرق بتانا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا تھا، ‘مہاتما گاندھی ہندو تھے، گوڈسے ہندتوا وادی۔ فرق کیا ہوتا ہے؟ فرق میں آپ کو بتاتا ہوں۔ چاہے کچھ بھی ہو جائے ہندو سچ کو تلاش کرتا ہے۔ مر جائے، کٹ جائے، پس جائے، ہندو سچ کو تلاش کرتا ہے۔ اس کا راستہ ستیہ گرہ ہے۔ پوری زندگی وہ سچ کو تلاش کرنے میں نکال دیتا ہے‘۔

      ہندو Vs ہندتوا وادی

      راہل گاندھی نے مزید کہا تھا، 'دو روحوں کی ایک ہی روح نہیں ہو سکتی، اسی طرح دو لفظوں کا ایک ہی مطلب نہیں ہو سکتا کیونکہ ہر لفظ کے الگ الگ معنی ہوتے ہیں۔ آج ملکی سیاست میں دو لفظوں کا ٹکراؤ ہے۔ دو مختلف الفاظ سے۔ ان کے معانی مختلف ہیں۔ ایک لفظ ہندو دوسرا لفظ ہندتوا۔ یہ ایک چیز نہیں ہے۔ یہ دو مختلف الفاظ ہیں اور ان کا مطلب بالکل مختلف ہے۔ میں ہندو ہوں، لیکن ہندوتواوادی نہیں ہوں‘۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: