ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

گجرات کاایسا گاؤں جہاں کوروناوائرس ابھی تک پہنچاہی نہیں ہے! آخراس کی وجہ کیاہے؟

شیال بیٹ (Shiyal Bet ) بحیرہ عرب (Arabian Sea) میں ہے۔ جس کے چاروں طرف سے پانی گھرا ہوا ہے۔ گجرات میں یہ ایسی جگہ ہے جو صرف کشتی کے ذریعہ قابل رسائی ہے۔

  • Share this:
گجرات کاایسا گاؤں جہاں کوروناوائرس ابھی تک پہنچاہی نہیں ہے! آخراس کی وجہ کیاہے؟
شیال بیٹ (Shiyal Bet ) بحیرہ عرب (Arabian Sea) میں ہے۔ جس کے چاروں طرف سے پانی گھرا ہوا ہے۔ گجرات میں یہ ایسی جگہ ہے جو صرف کشتی کے ذریعہ قابل رسائی ہے۔

عالمی وبا کورونا وائرس (کووڈ۔19) گجرات سمیت ملک کے ہر کونے میں پہنچ چکا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ گجرات میں ایک ہی دن میں کورونا وائرس کے 14,000 سے زیادہ نئے کیس رپورٹ ہوئے ہیں۔شہر تو شہر گجرات کے دیہاتوں میں بھی عالمی وبا کورونا وائرس (کووڈ۔19) کی دوسری لہر چل رہی ہے۔ شہریوں کے ساتھ ساتھ دیہاتی بھی اس وبا سے بری طرح متاثر ہیں۔


اس سب کے باوجود گجرات میں ایک ایسی جگہ بھی ہے، جہاں کورونا وائرس کے انفیکشن کا ایک کیس بھی رپورٹ نہں ہوا ہے۔ یہ گجرات کے امریلی (Amreli) ضلع کا شیال بیٹ (Shiyal Bet) گاؤں ہے۔ جو کورونا کے آغاز کے بعد سے ہی کورونا وائرس کے انفیکشن سے مکمل طور پر آزاد ہے۔


علامتی تصویر
علامتی تصویر


یہ گاؤں صرف کشتی کے ذریعے قابل رسائی ہے۔ یعنی یہاں آمد و رفت صرف کشتی کے ذریعے ہی ممکن ہے۔شیال بیٹ بحیرہ عرب میں ہے۔ جس کے چاروں طرف سے پانی گھرا ہوا ہے۔ گجرات میں یہ ایسی جگہ ہے جو صرف کشتی کے ذریعہ قابل رسائی ہے۔ اگرچہ یہ علاقہ کھارے پانی سے گھرا ہوا ہے، لیکن یہاں تازہ پانی کے کنواں بھی ہیں۔

جو بھی گاؤں تک پہنچنا چاہتا ہے۔ اسے پیپااوو (Pipavav) پر نجی جیٹی لے کر جانا پڑتا ہے۔ دیہاتیوں کے ساتھ یہاں تک کہ محکمہ صحت کے عہدیدار گاؤں تک پہنچنے کے لئے فاکس بیٹ کی کشتیاں استعمال کرتے ہیں۔شیال بیٹ کے سرپنچ حمیر بھائی شیال (Hamirbhai Shiyal) نے بتایا کہ ان کے گاؤں میں کورونا وائرس کے انفیکشن کا ایک بھی واقعہ نہیں ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ شروع سے اب تک کسی کو کورونا وائرس نہیں ہوا ہے۔

حمیر بھائی شیال نے بتایا کہ اب یہاں کے دیہاتی کورونا وائرس ویکسین لے رہے ہیں۔ اب تک 500 سے زائد افراد کو ویکسین دیا جاچکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان کے گاؤں کے رہائشی بغیر کسی کام کے گاؤں سے باہر جاتے ہی نہیں ہیں۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Apr 28, 2021 09:45 PM IST