اپنا ضلع منتخب کریں۔

    EXCLUSIVE: تو اس وجہ سے آفتاب نے شردھا کا کیا قتل، دہلی پولیس کے ذرائع نے بتائی وجہ

    EXCLUSIVE: تو اس وجہ سے آفتاب نے شردھا کا کیا قتل، دہلی پولیس کے ذرائع نے بتائی وجہ ۔ فائل فوٹو ۔

    EXCLUSIVE: تو اس وجہ سے آفتاب نے شردھا کا کیا قتل، دہلی پولیس کے ذرائع نے بتائی وجہ ۔ فائل فوٹو ۔

    دہلی پولیس کے ذرائع نے نیوز18 کو بتایا کہ ملزم آفتاب نے قبول کیا ہے کہ وہ اس بات کو قبول نہیں کر پا رہا تھا کہ شردھا اس کے ساتھ ریلیشن شپ ختم کرنا چاہتی ہے ۔ اس کی وجہ سے اس نے شردھا کو بے دردی سے موت کے گھاٹ اتار دیا ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | New Delhi | New Delhi
    • Share this:
      نئی دہلی : پورے ملک کو جھنجھوڑ کر رکھ دینے والے شردھا قتل کیس میں روز نئے انکشاف ہورہے ہیں ۔ اس درمیان ذرائع کے حوالہ سے نئی جانکاری سامنے آئی ہے ۔ دہلی پولیس کے ذرائع نے نیوز18 کو بتایا کہ ملزم آفتاب نے قبول کیا ہے کہ وہ اس بات کو قبول نہیں کر پا رہا تھا کہ شردھا اس کے ساتھ ریلیشن شپ ختم کرنا چاہتی ہے ۔ اس کی وجہ سے اس نے شردھا کو بے دردی سے موت کے گھاٹ اتار دیا ۔ بتادیں کہ 28 سالہ آفتاب پونہ والا نے شروعاتی پوچھ گچھ میں اس نے اس بات کو قبول کرنے سے انکار کردیا تھا کہ اس نے اپنی معشوقہ شردھا قتل اچانک اکساوے کی وجہ سے کیا تھا ۔

      دہلی پولیس نے 12 نومبر کو پونہ والا کو مبینہ طور پر شردھا والکر کا قتل کرنے، اس کے جسم کو 35 ٹکڑوں میں کاٹ کر شہر بھر میں پھینکنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا ۔ اس قتل کیس کی جانچ میں تقریبا 200 پولیس اہلکاروں کی الگ الگ ٹیم مصروف ہوئی ہے ۔ ذرائع نے بتایا کہ شردھا آفتاب پونہ والا کو چھوڑنا چاہتی تھی، لیکن چونکہ اس نے اپنے کنبہ کو چھوڑ دیا تھا اور دوستوں و رشتہ داروں سے کم سپورٹ تھا۔ اس کی وجہ سے شردھا کے پاس آفتاب پونہ والا کے ساتھ رہنے کے علاوہ کوئی متبادل نہیں باقی رہ گیا تھا ۔

      یہ بھی پڑھئے: فلم دی کشمیر فائلز پر تبصرہ کرنا IFFI جیوری ہیڈ کو پڑا بھاری، جانئے پورا معاملہ


      یہ بھی پڑھئے: اسمبلی انتخابات:سمبت پاترا نے کہا، کھڑگے نےPM Modiکو کہا 'راون'، گجرات کےلوگ سکھائیں گےسبق


      سی این این ۔ نیوز 18 نے پہلے خبر دی تھی کہ پونہ والا اور والکر کا بریک اپ ہوگیا تھا اور وہ مہرولی میں صرف فلیٹ میٹس کے طور پر ساتھ رہ رہے تھے ۔ جانچ میں یہ بھی جانکاری سامنے آئی ہے کہ جب آفتاب کی خاتون دوست اس کے فلیٹ پر آتی تھی، تب بھی شردھا کے لاش کے ٹکڑے فلیٹ میں رکھے ہوئے تھے ۔ فی الحال پولیس انہیں متاثرہ مان رہی ہے، کیونکہ وہ تو جرم میں شامل تھی اور نہ ہی انہیں اس کی جانکاری دی تھی ۔

      دہلی پولیس کے ذرائع نے بتایا کہ پونہ والا نے اپنی پوری انٹرنیٹ ہسٹری بھی ڈیلیٹ کردی ہے ۔ پولیس نے فیس بک ، انسٹاگرام، گوگل اور پے ٹی ایم کے یو پی آئی گیٹ وے اور گوگل پے اور فوڈ ڈیلیوری ویب سائٹ زومیٹو سے تفصیل مانگنے کیلئے خط لکھا ہے ۔ پے ٹی ایم نے جہاں دہلی پولیس کو اپنا جواب سونپ دیا ہے ۔ وہیں زومیٹو نے کہا کہ آفتاب دو لوگوں کیلئے کھانا آرڈر کرتا تھا ۔ دہلی پولیس ابھی بھی شردھا والکر کے موبائل فون کی تلاش کررہی ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: