سپریم کورٹ کی اجازت کے بعد سری نگر روانہ ہوئے سیتارام یچوری، 5 اضلاع میں موبائل خدمات بحال

سیتارام یچوری نے سپریم کورٹ سے اپنے رکن اسمبلی اور دوست تاریگامی کی عیادت کی اجازت مانگی تھی۔ اس پر چیف جسٹس رنجن گوگوئی نے کہا تھا کہ ہم آپ کو آپ کے دوست سے ملنے کی اجازت دیں گے لیکن اس دوران آپ کچھ اور کام نہیں کر پائیں گے۔

Aug 29, 2019 10:01 AM IST | Updated on: Aug 29, 2019 10:10 AM IST
سپریم کورٹ کی اجازت کے بعد سری نگر روانہ ہوئے سیتارام یچوری، 5 اضلاع میں موبائل خدمات بحال

سیتارام یچوری اپنے ساتھیوں کے ہمراہ

کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا (سی پی ایم) کے سکریٹری جنرل سیتا رام یچوری بدھ کو سپریم کورٹ کے فیصلے کے پیش نظر اپنی پارٹی کے بیمار لیڈر محمد یوسف تاریگامی کی عیادت کے لئے آج یعنی جمعرات کو سری نگر کے لئے روانہ ہو گئے۔ یچوری نے سپریم کورٹ سے اپنے رکن اسمبلی اور دوست تاریگامی کی عیادت کی اجازت مانگی تھی۔ اس پر چیف جسٹس رنجن گوگوئی نے کہا تھا کہ ہم آپ کو آپ کے دوست سے ملنے کی اجازت دیں گے لیکن اس دوران آپ کچھ اور کام نہیں کر پائیں گے۔ وہیں، جموں وکشمیر میں آرٹیکل 370 ہٹنے کے 25 ویں دن جموں کے پانچ اضلاع میں موبائل خدمات بحال کر دی گئی ہیں۔

سپریم کورٹ سے اجازت ملنے کے بعد سیتارام یچوری نے ٹویٹ کیا تھا ’’ سپریم کورٹ نے مجھے سری نگر جا کر کامریڈ یوسف تاریگامی سے ملنے کی اجازت دے دی ہے۔ عدالت نے مجھے ان کی صحت کے بارے میں اسے ’ بتانے‘ کو کہا ہے۔ میں ان سے ملنے، لوٹنے اور عدالت کو اس کی جانکاری دینے کے بعد ہی تفصیلی بیان دوں گا‘‘۔

Loading...

بتا دیں کہ یچوری اس مہینے جموں وکشمیر جانے کی دو بار کوشش کر چکے ہیں۔ انہوں نے ایک بار ڈی راجا اور ایک دیگر بار اپوزیشن پارٹیوں کے نمائندہ وفد کے ساتھ وہاں جانے کی کوشش کی تھی۔ انہیں جموں وکشمیر انتظامیہ کے حکم پر دونوں بار سری نگر ہوائی اڈے سے لوٹنا پڑا تھا۔ انہیں سیکورٹی وجوہات کا حوالہ دیتے ہوئے جانے نہیں دیا گیا تھا۔

Loading...