ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

رانچی میں سماجی تنظیموں نے کیا احتجاج، فادراسٹین سوامی اورعمر خالدکی گرفتاری کےخلاف خاموش احتجاج

جھارکھنڈ کے دارالحکومت رانچی کے البرٹ ایکا چوک پر آج مختلف سماجی تنظیموں سے جڑے لوگوں نے رانچی کے ضعیف العمر سماجی کارکن فادر اسٹین سوامی اور جے این یو کے سابق طالب علم عمر خالد کی گرفتاری کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔

  • Share this:
رانچی میں سماجی تنظیموں نے کیا احتجاج، فادراسٹین سوامی اورعمر خالدکی گرفتاری کےخلاف خاموش احتجاج
رانچی میں سماجی تنظیموں نے کیا احتجاج، فادراسٹین سوامی اورعمر خالدکی گرفتاری کےخلاف خاموش احتجاج

رانچی: جھارکھنڈ کے دارالحکومت رانچی کے البرٹ ایکا چوک پر آج مختلف سماجی تنظیموں سے جڑے لوگوں نے رانچی کے ضعیف العمر سماجی کارکن فادر اسٹین سوامی اور جے این یو کے سابق طالب علم عمر خالد کی گرفتاری کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔ ہم ہیں فادر اسٹین سوامی اور عمر خالد کے ساتھ پیغام لکھے ہاتھوں میں تختی لئے لوگوں نے خاموش احتجاج کیا۔ اس موقع پر ان لوگوں نے کہا کہ ملک کے مختلف شہروں میں انسانی حقوق کے لئے آواز بلند کرنے والے لوگوں کے خلاف قدم اٹھایا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت کے ذریعہ ایسے لوگوں کے خلاف ظلم زیادتی کو لے کر وہ لوگ متحد ہوکر آواز بلند کر رہے ہیں۔ ساتھ ہی انہوں نےکہا کہ بے بنیاد الزام میں گرفتار لوگوں کی رہائی کے مطالبات کےمقصد سے خاموش احتجاج کر رہے ہیں۔ ان لوگوں نے 9 نکاتی مطالبات پیش کرتے ہوئے کہا کہ۔

١ ضعیف العمر سماجی و انسانی حقوق کے لئے آواز بلند کرنے والے سماجی کارکن فادر اسٹین سوامی کو رہا کیا جائے۔

٢ جے این یو کے سابق طالب علم عمر خالد و دیگر انسانی حقوق کے لئے قدم اٹھانے والے لوگوں کے خلاف جھوٹے مقدمات کے تحت گرفتاری بند کی جائے۔


ہم ہیں فادر اسٹین سوامی اور عمر خالد کے ساتھ پیغام لکھے ہاتھوں میں تختی لئے لوگوں نے خاموش احتجاج کیا۔
ہم ہیں فادر اسٹین سوامی اور عمر خالد کے ساتھ پیغام لکھے ہاتھوں میں تختی لئے لوگوں نے خاموش احتجاج کیا۔


٣ ظلم کے خلاف آواز اٹھانے والے رانچی کے لوگوں کی وہ لوگ حمایت کرتے ہیں۔
٤ ظلم و زیادتی کو بند کرنےکا مطالبہ کرتے ہیں۔
٥ مادی، سماجی اور انسانی حقوق کے لئے قدم اٹھانے والے لوگوں کے خلاف کاروائی بند کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں۔
٦ جل، جنگل، زمین کی آواز فادر اسٹین سوامی کی رہائی کا مطالبہ کر تے ہیں۔
٧ مخالفت کرنے کے جمہوری حقوق پر حملہ بند کیا جائے۔

٨ فادر اسٹین سوامی کی گرفتاری کے خلاف وزیر اعلیٰ ہیمنت سورین کے اسٹینڈ کی حمایت کرتے ہیں۔
٩ تحفظ فراہم کرنے والے قوانین کے غلط استعمال کو بند کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں۔

اس احتجاجی مظاہرہ میں اے آئی پی ایف، جے ایم سی سی، جھارکھنڈ یوتھ فائونڈیشن اور اے پی سی آر نامی تنظیموں سے جڑے ندیم خان، صلاح الدین عرف سنجو، محمد ببر، نواب چشتی، محمد عارف خان، ساجد عمر، محمد اکرم راشد، اصغر خان، شاہنواز عباس، ضیاء اللہ، محمد ثاقب ضیاء، ایڈوکیٹ محمد رضا اللہ، محمد خلیل، محمد منا، پرپھل لنڈا، آکاش رنجن و دیگر سماجی کارکنان شامل ہوئے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Oct 14, 2020 11:57 PM IST