உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Madhya Pradesh:کٹنی میں نرمدہ وادی پروجیکٹ کی ٹنل میں دھنس گئی مٹی! 9مزدور دب گئے، 5 نکالے گئے، ریسکیو آپریشن جاری

    مزدوروں کو نکالنے کے لئے ریسکیو آپریشن جاری۔ (تصویر: ANI)

    مزدوروں کو نکالنے کے لئے ریسکیو آپریشن جاری۔ (تصویر: ANI)

    کٹنی ضلع کے برگی سے بان ساگر جانے والی نرمدا کے دائیں کنارے پراجکٹ کی زیر زمین نہر کا کام چل رہا ہے۔ جہاں یہ پراجیکٹ حیدرآباد کی ایک پرائیویٹ کمپنی بنا رہی ہے۔ اسی دوران ہفتہ کی دیر شام اچانک زیر زمین نہر کی مٹی دھنس گئی۔

    • Share this:
      کٹنی:مدھیہ پردیش(Madhya Pradesh) کے کٹنی(Katni) ضلع کے سلیمان آباد میں ہفتہ کو نرمدا رائٹ بینک کنال اسکیم کی زیر زمین نہر دھنسنے سے نو مزدور پھنس گئے۔ جہاں ان میں سے 5 مزدوروں کو باہر نکال کر علاج کے لیے اسپتال بھیج دیا گیا ہے۔ تاہم ابھی بھی 4 مزدوروں کے سرنگ میں پھنسے ہونے کی خبر ہے۔ اس وقت پولیس اور ضلعی انتظامیہ ریسکیو ٹیم آپریشن میں مصروف ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ ایس ڈی آر ایف کی ٹیم بھی دیر رات جبل پور سے جائے حادثہ کے لیے روانہ ہو گئی ہے۔ وہیں ریاست کے وزیر اعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان (CM Shivraj Singh Chouhan) نے واقعے پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے ضلع انتظامیہ کو زخمیوں کے مناسب علاج کی ہدایت دی ہے۔


      دراصل میڈیا رپورٹس سے ملی اطلاع کے مطابق کٹنی ضلع کے برگی سے بان ساگر جانے والی نرمدا کے دائیں کنارے پراجکٹ کی زیر زمین نہر کا کام چل رہا ہے۔ جہاں یہ پراجیکٹ حیدرآباد کی ایک پرائیویٹ کمپنی بنا رہی ہے۔ اسی دوران ہفتہ کی دیر شام اچانک زیر زمین نہر کی مٹی دھنس گئی۔ تاہم اس کے باعث زیر زمین نہر کے اندر کام کرنے والے 9 مزدور دب گئے۔


      واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس اور ضلع انتظامیہ کے اہلکار موقع پر پہنچ گئے ہیں جس کے بعد راحت اور بچاؤ کا کام جاری ہے۔ اس وقت مشینوں سے مٹی ہٹانے کا کام جاری ہے۔ ایسے میں 5 مزدوروں کو باہر نکال کر علاج کے لیے ضلع اسپتال بھیجا گیا ہے۔ ساتھ ہی باقی 4 کارکنوں کو نکالنے کی کوششیں جاری ہیں۔

      وزیراعلیٰ شیوراج نے کٹنی انتظامیہ کو دئیے زخمیوں کی مدد کے احکام
      قابل ذکر ہے کہ ریاست کے وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان نے سلیمان آباد میں سرنگ کی تعمیر کے دوران حادثے اور مزدوروں کے زخمی ہونے پر دکھ کا اظہار کیا ہے۔ اس دوران وزیراعلیٰ نے کٹنی ضلعی انتظامیہ کو متاثرہ علاقوں میں زخمیوں کے مناسب علاج اور ضروری امدادی کاموں کے ساتھ ساتھ پھنسے ہوئے مزدوروں کو بچانے کے لیے ریسکیو آپریشن کو تیز کرنے کی ہدایت کی ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: