سومناتھ کے وکیل کا کیجریوال کو خط، مودی حکومت کو بتایا بہتر

نئی دہلی۔ اپنی اہلیہ کے ساتھ مار پیٹ کے الزامات میں گھرے عام آدمی پارٹی کے ممبر اسمبلی سومناتھ بھارتی کی پیشگی ضمانت پر آج سپریم کورٹ میں سماعت ہے۔

Sep 28, 2015 01:04 PM IST | Updated on: Sep 28, 2015 01:04 PM IST
سومناتھ کے وکیل کا کیجریوال کو خط، مودی حکومت کو بتایا بہتر

نئی دہلی۔  اپنی اہلیہ کے ساتھ مار پیٹ کے الزامات میں گھرے عام آدمی پارٹی کے ممبر اسمبلی سومناتھ بھارتی کی پیشگی ضمانت پر آج سپریم کورٹ میں سماعت ہے۔ اس درمیان ان کے وکیل نے دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کو خط لکھ کر کہا ہے کہ مودی اور آپ کی حکومت میں ایک بڑا فرق یہ ہے کہ چاہے اچھا ہو یا برا مودی اپنے ساتھیوں کا ساتھ دیتے ہیں، اس کی مثال ہیں سشما سوراج اوراسمرتی ایرانی جو تنازعات میں گھری رہیں۔ وہیں، کیجریوال نے سومناتھ کا ساتھ ہائی کورٹ کے فیصلے کے بعد ہی چھوڑ دیا، جبکہ سومناتھ کے پاس ابھی سپریم کورٹ کا راستہ کھلا ہے۔

سومناتھ کے وکیل نے کیجریوال کے ساتھ ساتھ دہلی پولیس کو بھی ایک خط لکھا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ مفرور، پیشہ ورانہ مجرم جیسے الفاظ کا استعمال سومناتھ کے لئے نہ کیا جائے۔ بتا دیں کہ دہلی ہائی کورٹ سے ضمانت عرضی مسترد ہونے کے بعد عام آدمی پارٹی کے ممبر اسمبلی سومناتھ بھارتی نے سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹایا ہے۔ گرفتاری کے ڈر سے فی الحال وہ فرار چل رہے ہیں۔ پولیس کی لاکھ کوششوں کے باوجود وہ اب تک شکنجے میں آنے سے بچے ہوئے ہیں۔ ان پر ان کی بیوی نے قتل کی کوشش اور گھریلو تشدد کا الزام لگایا ہے۔

Loading...

 

 

Loading...