உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    PM Modi: آج سے وزیر اعظم نریندر مودی کا تین روزہ دورہ یورپ، 9:30 بجے صبح پہنچیں گے برلن

    وزیر اعظم نریندر مودی (Prime Minister Narendra Modi) (فائل فوٹو)

    وزیر اعظم نریندر مودی (Prime Minister Narendra Modi) (فائل فوٹو)

    ایم ای اے نے ایک بیان میں کہا کہ برلن میں وزیر اعظم جرمنی کے وفاقی چانسلر اولاف شولز کے ساتھ دو طرفہ بات چیت کریں گے اور دونوں رہنما ہندوستان-جرمنی بین حکومتی مشاورت (IGC) کے چھٹے ایڈیشن کی مشترکہ صدارت کریں گے۔ یہ وزیراعظم مودی کی چانسلر سے پہلی ملاقات ہوگی جنہوں نے گزشتہ سال دسمبر میں اپنی پیشرو انجیلا مرکل سے اعلیٰ عہدے کا چارج سنبھالا تھا۔

    • Share this:
      آج وزریر اعظم ہند نریندر مودی (Prime Minister Narendra Modi) کا تین روزہ دورہ یورپ(Europe Tour) شروع ہوچکا ہے۔ وہ صبح 9:30 بجے برلن (Berlin) پہنچیں گے۔ یہ وزیر اعظم نریندر مودی کے سفر کا بھرپور شیڈول ہے۔ کیونکہ وہ اس سال اپنے پہلے بیرون ملک دورے پر جا رہے ہیں۔ حکومتی ذرائع نے ہفتے کے روز بتایا کہ وزیر اعظم آج یعنی 2 مئی 2022 سے جرمنی، ڈنمارک اور فرانس کے تین روزہ دورے پر جائیں گے، جو کہ تقریباً 65 گھنٹے پر محیط ہوگا۔

      حکومتی ذرائع نے خبر رساں ایجنسی پریس ٹرسٹ آف انڈیا کو بتایا کہ وزیر اعظم مودی سات ممالک کے آٹھ عالمی رہنماؤں کے ساتھ دو طرفہ اور کثیر جہتی ملاقاتیں کریں گے اور 50 عالمی کاروباری رہنماؤں کے ساتھ بات چیت کریں گے۔ وہ ہندوستانی کمیونٹی کے ہزاروں افراد سے بھی گفتگو کریں گے۔

      یہ دورہ یوکرین کے بحران کے پس منظر میں ہو رہا ہے، جس نے روس کے خلاف زیادہ تر یورپ کو متحد کر دیا ہے۔ وزیر اعظم مودی جرمنی اور ڈنمارک میں ایک ایک رات گزاریں گے جبکہ دو راتیں فلائٹ میں گزاریں گے۔ پیرس میں، مودی فرانس کے صدر ایمانوئل میکرون سے بات چیت کریں گے، جو صدارتی انتخابات میں شدید لڑائی میں دوبارہ اعلیٰ عہدے کے لیے منتخب ہوئے تھے۔

      ایم ای اے نے ایک بیان میں کہا کہ برلن میں وزیر اعظم جرمنی کے وفاقی چانسلر اولاف شولز کے ساتھ دو طرفہ بات چیت کریں گے اور دونوں رہنما ہندوستان-جرمنی بین حکومتی مشاورت (IGC) کے چھٹے ایڈیشن کی مشترکہ صدارت کریں گے۔  یہ وزیراعظم مودی کی چانسلر سے پہلی ملاقات ہوگی جنہوں نے گزشتہ سال دسمبر میں اپنی پیشرو انجیلا مرکل سے اعلیٰ عہدے کا چارج سنبھالا تھا۔


      سال 2021 میں ہندوستان اور جرمنی نے سفارتی تعلقات کے قیام کے 70 سال کی یاد منائی اور 2000 سے اسٹریٹجک شراکت دار ہیں۔ یہ دورہ وسیع شعبوں میں تعاون کو بڑھانے اور تیز کرنے کا ایک موقع ہو گا اور دونوں حکومتوں کے لیے علاقائی امور پر خیالات کا تبادلہ کرنے کا موقع ملے گا۔ اور باہمی دلچسپی کے عالمی معاملات۔

      مزید پڑھیں: جموں وکشمیر: کلگام میں لشکر کا ایک ہائی برڈ دہشت گرد گرفتار، ہتھیار-گولہ بارود برآمد

      اس کے بعد وزیر اعظم ڈنمارک کے وزیر اعظم میٹے فریڈرکسن کی دعوت پر سرکاری دورے پر کوپن ہیگن جائیں گے۔ وہ ڈنمارک کی میزبانی میں ہونے والی دوسری ہندوستان-نارڈک چوٹی کانفرنس میں بھی شرکت کریں گے۔

      مزید پڑھیں: پاکستان گئے 17 کشمیری نوجوان ہلاک کئے گئے، کچھ کو دی گئی تھی ہتھیاروں کی ٹریننگ

      اس دورے کے دوطرفہ جزو میں وزیر اعظم فریڈرکسن کے ساتھ بات چیت کے ساتھ ساتھ مہاراج ملکہ مارگریتھ II کے ساتھ سامعین بھی شامل ہوں گے۔ گرین اسٹریٹجک پارٹنرشپ ہندوستان اور ڈنمارک کے درمیان اپنی نوعیت کا پہلا انتظام تھا۔

       
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: