உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اسد الدین اویسی نے کہا: اس مرتبہ مودی لہر نہیں، غیر۔بی جے پی، غیر کانگریس پی ایم بنے گا

    اسدالدین اویسی نے کہا کہ لوک سبھا انتخابات "کھلے انتخابات' ہوں گے اور 543 پارلیمانی سیٹوں میں سے تقریبا پر سیٹ پر مقابلہ ہوگا۔

    اسدالدین اویسی نے کہا کہ لوک سبھا انتخابات "کھلے انتخابات' ہوں گے اور 543 پارلیمانی سیٹوں میں سے تقریبا پر سیٹ پر مقابلہ ہوگا۔

    اسدالدین اویسی نے کہا کہ لوک سبھا انتخابات "کھلے انتخابات' ہوں گے اور 543 پارلیمانی سیٹوں میں سے تقریبا پر سیٹ پر مقابلہ ہوگا۔

    • Share this:
      آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین (اے آئی ایم آئی ایم) کے صدر اسدالدین اویسی نے جمعرات کو دعوی کیا کہ 2014 کی طرح اس مرتبہ لوک سبھا انتخابات میں کوئی مودی لہر نہیں ہے اور اس مرتبہ مرکز میں غیر۔بی جے پی ، غیر کانگریس مورچے کی حکومت بنے گی اور ایک علاقائی لیڈر وزیر اعظم کے طور پر ابھرےگا۔ حیدرآباد کے پارلیمانی حلقے سے تین مرتبہ ایم پی منتخب ہو چکے اویسی نے یہ بھی کہا کہ یہ لوک سبھا انتخابات "کھلے انتخابات' ہوں گے اور 543 پارلیمانی سیٹوں میں سے تقریبا پر سیٹ پر سخت مقابلہ ہوگا۔
      اویسی نے ایک انٹرویو میں کہا "اس مرتبہ 2014 کی طرح مودی لہر نہیں ہے۔ یہ کھلے انتخابات ہیں اور حیدرآباد سمیت ہر سیٹ پر سخت مقابلہ ہوگا'۔
      اس مرتبہ بھی حیدرآباد سیٹ سے ہی انتخابات لڑ رہے اویسی نے کہا کہ ان کی پارٹی اے آئی ایم آئی ایم یقینا ہی غیر۔کانگریسی اور غیر۔بی جے پی مورچے کا حصہ ہے جس کی قیادت تلنگانہ وزیر اعلی کے چندر شیکھر راؤ کر رہے ہیں۔
      اویسی نے  دعوی کیا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی اپنی ناکامیوں کو چھپانے کیلئے انتخابات کیلئے نیشنل سکیورٹی کا سہارا لے رہی ہے لیکن لوگ پھر سے اس کے'جملوں' (جھوٹے وعدوں) کے چکر میں نہیں پڑیں گے اور ذمہ داری سے ووٹنگ کریں گے۔
      First published: