உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کرناٹک انتخابات: بی جے پی کو ملیں گی 130 سے زیادہ سیٹیں: امت شاہ کا دعوی

    میسور: کرناٹک اسمبلی انتخابات سے قبل تشہیر کے آخری روز بی جے پی کے قومی صدرامت شاہ نے دعوی کیا کہ ان کی پارٹی کو 130 سے زیادہ سیٹیں ملیں گی۔ انہوں نے الزام لگایا کہ کانگریس کرناٹک الیکشن "غیر جمہوری" طریقے سے جیتنا چاہتی ہے۔

    میسور: کرناٹک اسمبلی انتخابات سے قبل تشہیر کے آخری روز بی جے پی کے قومی صدرامت شاہ نے دعوی کیا کہ ان کی پارٹی کو 130 سے زیادہ سیٹیں ملیں گی۔ انہوں نے الزام لگایا کہ کانگریس کرناٹک الیکشن "غیر جمہوری" طریقے سے جیتنا چاہتی ہے۔

    • Share this:
      میسور: کرناٹک اسمبلی انتخابات سے قبل تشہیر کے آخری روز بی جے پی کے قومی صدرامت شاہ نے دعوی کیا کہ ان کی پارٹی کو 130 سے زیادہ سیٹیں ملیں گی۔ انہوں نے الزام لگایا کہ کانگریس کرناٹک الیکشن "غیر جمہوری" طریقے سے جیتنا چاہتی ہے۔

      ریاست میں 12 مئی کو ہونے جارہے الیکشن کے لئے اپنی پارٹی کی انتخابی تشہیری مہم کو ختم کرتے ہوئے انہوں نے یقین کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ بی جے پی اپنے دم پر سرکار بنائے گی۔

      انہوں نے دعوی کیا کہ بی جے پی 224 رکنی اسمبلی میں کم ازکم 130 سیٹیں جیتے گی اور کسی دوسری پارٹی کی حمایت کی ضرورت نہیں پڑے گی۔ انہوں نے دعوی کیا کہ ہم مکمل اکثریت سے جیت حاصل کرنے جارہے ہیں۔ بی جے پی 130 سے زیادہ سیٹیں جیتے گی، کسی کو حمایت دینے اور لینے کا سوال ہی نہیں ہے۔

       

       

      انہوں نے کہاکہ کانگریس غیر جمہوری طریقے سے الیکشن جیتنا چاہتی ہے۔ گزشتہ تین دن میں ہوئے حادثہ سے پورے ملک کے وہ لوگ صدمے میں ہیں جو جمہوریت کی مضبوطی کو لے فکر مند رہتے ہیں۔ انہوں نے یہ بات ایک فلیٹ میں فرضی ووٹر لسٹ برآمد ہونے کے واقعہ کا ذکر کرتے ہوئے کہی۔

      اس سے قبل انہوں نے بادامی اسمبلی حلقہ میں ایک بڑا روڈ شو کیا۔ وزیراعلیٰ سدارمیا بادامی کے ساتھ ساتھ میسور کی چامنڈیشوری سیٹ سے بھی الیکشن لڑرہے ہیں۔

      بی جے پی صدر نے کہاکہ جس طرح سے ایک فلیٹ میں فرضی ووٹرکارڈ بن رہے تھے، جس طرح سے رائے دہندگان کو شامل کرنے کے لئے درخواستوں کے کاونٹر فائل پائے گئے، جس طرح سے وہاں کلرپرنٹر اور کمپیوٹر پائے گئے، اس سے پتہ چلتا ہے کہ کانگریس الیکشن جیتنے کے لئے کتنی پریشان ہے۔

      https://twitter.com/AmitShah/status/994517054609920000

      انہوں نے کہا کہ کانکنی تاجر جناردن ریڈی کا بی جے پی سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہاکہ میں نے جو کہہ دیا، وہ آخری (بات) ہے۔ امت شاہ نے کہاکہ 5 سال تک سدارمیا کی سرکار رہی ہے اور انتخابی تشہیر کے دوران کرناٹک کے کئی حصوں میں جانے کے بعد مجھے یہ کہنے میں کوئی جھجھک نہیں ہے کہ آزاد بھارت میں سب سے خراب اور ناکام سرکار سدارمیا کی رہی ہے۔

       

       

       
      First published: