ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

دہشت گردی کے کیس میں بلال کو عمر قید کی سزا، لشکرطیبہ سےتعلق کے الزام میں 2007 میں کیا گیا تھا گرفتار

بنگلورومیں دہشت گردی کیس میں قصوروار قرار دئے گئے بلال نامی ایک شخص کوعدالت نے آج عمرقید کی سزا سنائی ہے۔

  • ETV
  • Last Updated: Oct 05, 2016 10:48 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
دہشت گردی کے کیس میں بلال کو عمر قید کی سزا، لشکرطیبہ سےتعلق کے الزام میں 2007 میں کیا گیا تھا گرفتار
بنگلورومیں دہشت گردی کیس میں قصوروار قرار دئے گئے بلال نامی ایک شخص کوعدالت نے آج عمرقید کی سزا سنائی ہے۔

بنگلورو : بنگلورومیں دہشت گردی کیس میں قصوروار قرار دئے گئے بلال نامی ایک شخص کوعدالت نے آج عمرقید کی سزا سنائی ہے۔ بنگلورو کی سٹی سیول کورٹ نے یہ سزا سنائی۔ خیال رہے کہ لشکرطیبہ سے تعلق رکھنے کے الزام میں بلال کو 2007 میں گرفتار کیا گیا تھا۔

بنگلورو کی سٹی سول کورٹ میں سخت حفاظتی انتظامات کے درمیان بلال کو پیش کیا گیا۔ جسٹس کوٹریش ایم ہیرمٹھ پرمشتمل ایک رکنی بینچ نے بلال کوعمرقید کی سزا کا اعلان کیا۔ 04 اکتوبر کو عدالت نے بلال کو قصوروار قراردیا تھا۔ واضح رہےکہ بلا ل کو سال 2007میں بنگلورو کی سینٹرل کرائم برانچ پولیس نے گرفتارکیا تھا۔

عدالت میں پیشی کےبعد بلال نے جج کے سامنے خود کوبے قصورقرار دیا ۔ بلال نے کہا کہ وہ دہشت گردنہیں ہے۔ بلکہ ایک اچھا ہندوستانی اورتعلیم یافتہ ہے۔ بلال نے کہا کہ گرفتاری کے وقت اس کے پاس موجود گن ناکارہ تھی۔ دوسری جانب سرکاری وکیل نے بلال کوسخت ترین سزا دینے کی عدالت سے اپیل کی ۔ آخرکارعدالت نےقصوروار ٹھہرائے گئے بلال کوعمر قید کی سزا کااعلان کیا۔

بنگلورو میں حالیہ دنوں یہ دوسرا واقعہ ہے جہاں عدالت نے دہشت گردی کے معاملے میں گرفتارملزمین کو قصوروار قرار دیا ہے۔ اس سے قبل13 نوجوانوں کو عدالت نےدہشت گردی کے الزام میں قصوروار قراردیتے ہوئے پانچ سال کی سزا سنائی تھی ۔

First published: Oct 05, 2016 10:47 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading