உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    چنئی میں ٹھہر گئی زندگی ، فوج ، فضائیہ ، بحریہ اور این ڈی آر ایف راحت رسانی میں مصروف ، 269 اموات

    چنئی:چنئی میں شدید بارش اور سیلاب کی وجہ سے زندگیاں ٹھہر سی گئی ہیں ۔ لوگوں کے پاس نہ تو کچھ کھانے کیلئے بچا ہے اور بہت سارے لوگوں کے پاس پیسہ بھی نہیں۔ یومیہ مزدوری کرکے اپنا اور اپنے کنبہ کا پیٹ بھروانے والوں کا تو اور بھی برا حال ہوگیا ہے۔

    چنئی:چنئی میں شدید بارش اور سیلاب کی وجہ سے زندگیاں ٹھہر سی گئی ہیں ۔ لوگوں کے پاس نہ تو کچھ کھانے کیلئے بچا ہے اور بہت سارے لوگوں کے پاس پیسہ بھی نہیں۔ یومیہ مزدوری کرکے اپنا اور اپنے کنبہ کا پیٹ بھروانے والوں کا تو اور بھی برا حال ہوگیا ہے۔

    چنئی:چنئی میں شدید بارش اور سیلاب کی وجہ سے زندگیاں ٹھہر سی گئی ہیں ۔ لوگوں کے پاس نہ تو کچھ کھانے کیلئے بچا ہے اور بہت سارے لوگوں کے پاس پیسہ بھی نہیں۔ یومیہ مزدوری کرکے اپنا اور اپنے کنبہ کا پیٹ بھروانے والوں کا تو اور بھی برا حال ہوگیا ہے۔

    • Agencies
    • Last Updated :
    • Share this:

      چنئی:چنئی میں شدید بارش اور سیلاب کی وجہ سے زندگیاں ٹھہر سی گئی ہیں ۔ لوگوں کے پاس نہ تو کچھ کھانے کیلئے بچا ہے اور بہت سارے لوگوں کے پاس پیسہ بھی نہیں۔ یومیہ مزدوری کرکے اپنا اور اپنے کنبہ کا پیٹ بھروانے والوں کا تو اور بھی برا حال ہوگیا ہے۔


      بے گھر ہو چکے لوگوں کو دور دراز کے ہوٹلوں یا رشتہ داروں کے گھروں میں پناہ لینے پر مجبور ہونا پڑ رہا ہے۔ وہیں غریب اور ضرورت مندوں کو یا تو ریلوے اسٹیشنوں پر سماج دشمن عناصر لوگوں کا سامنا کرنا پڑر ہا ہے یا بھیڑ بھاڑ والے ریلیف کیمپوں میں جدوجہد کرنی پڑ رہی ہے۔


      चेन्नई: ठहर गई जिंदगियां, न खाने को कुछ बचा, न पैसा


      پبلک ٹرانسپورٹ کے تعطل، بجلی اور ضروری اشیاء کی کمی کی وجہ سے شہر اور نواح میں عام زندگی مکمل طور پر ٹھپ ہوگئی ہے۔ ٹیلی فون ٹاورس کام نہیں کررہے ہیں۔ موبائل فون سروس اور لینڈ لائن فون سروس مکمل طور بند ہیں۔ شہر کے بیشتر علاقوں میں احتیاطی طور پر بجلی کاٹ دی گئی ہے۔


      تاہم جینے کا حوصلہ عوام کو ایک دوسرے کی مدد پر آمادہ کررہا ہے۔ سوشل میڈیا کا استعمال بھی کافی مثبت طور پر کیا جا رہا ہے۔ اسی دوران ہوا کے کم دباؤ کے سبب آنے والے 24گھنٹوں میں مزید بارش کا امکان ظاہر کیا گیا ہے ۔


      فوج، بحریہ ، فضائیہ ، قومی ڈیزاسٹر ریلیف فورس، پولیس اور فائر فائٹرز کی ٹیمیں راحت رسانی کے کام لگی ہوئی ہیں ۔


      chennai_rains9


      حالت اتنی خراب ہوگئی ہے کہ چنئی کے اسپتالوں سے مریضوں کو منتقل کرنے میں بھی مشکلات پیش آرہی ہیں ، کیونکہ اسپتالوں میں بھی سیلاب کا پانی جمع ہوگیا ہے۔ سڑکیں پانی میں ڈوبی ہوئی ہیں، ریلوے اور ہوائی ٹریفک بھی بری طرح متاثر ہے۔


      اب تک موصولہ اطلاعات کے مطابق تمل ناڈو میں بارش اور سیلاب سے وابستہ واقعات میں 269 افراد کی موت ہوچکی ہے۔ آندھرا پردیش میں 54 اور پڈوچیری میں دو افراد کی موت ہوئی ہے۔ کروڑوں کا نقصان کا اندازہ لگایا جارہا ہے۔  تمل ناڈو کی سیلابی صورتحال سے تقریبا 50 لاکھ افراد متاثر ہوئے ہیں۔


      چنئی کے اطرافی اضلاع میں وقفہ وقفہ سے بارش ہورہی ہے۔کانچی پورم ، تروولور، کوڈالور اور ویلّوپورم میں کل بھاری بارش ہوئی تھی۔آج ان علاقوں میں وقفہ وقفہ سے بارش ہورہی ہے۔



      تمل ناڈو کی سرحدوں سے متصل آندھرا پردیش کے اضلاع چتور، نیلور اور دیگر اضلاع میں بھی بارش ہو رہی ہے۔ اس کے علاوہ پڑوسی ریاستوں میں بھی بارش کا امکان ہے۔نیلور اور چتور کے نشیبی علاقے ڈوب گئے ہیں اور چھوٹی ندیوں میں پانی کا بہاؤ تیزہوگیاہے۔


      چنئی میں سیلابی صورتحال کی وجہ سے سڑک اور ریل خدمات بند ہیں جس سے ہزاروں مسافر ائیرپورٹس اور مختلف ریلوے اسٹیشنوں میں پھنسے ہوئے ہیں۔نواحی علاقوں کیلئے ریل خدمات بھی بند ہیں۔

      First published: